عمران خان کا ایک مخصوص رویہ اور عادت - عمران زاہد

غور کیجیے رویے کا ایک مخصوص پیٹرن ہے جو بار بار دہرایا جا رہا ہے۔ : پیٹرن یہ ہےکہ جب بھی اپنے خلاف کیس ہو تو اسے لٹکاؤ، ممکن ہو تو پیش ہی نہ ہو تاکہ غیرحاضری میں فیصلہ صادر ہونے کو عدم انصاف سے تعبیر کیا جا سکے۔ اور اگر کسی مخالف کے خلاف کیس سے کوئی معدوم سے معدوم سیاسی فائدہ حاصل ہونے کی توقع ہو...