ایک وراثت یہ بھی ہے: مفتی محمد وقاص رفیعؔ

رحمت دین سیدھے سادے دین دار آدمی تھے ۔ گاؤں کی معمولی آمدنی پر گزارہ کرلیتے ۔ 60 سال کی عمر میں وہ 4 بچے چھوڑ کر مرے تو ان کے لئے انہوں نے کوئی قابل ذکر جائیداد نہیں چھوڑی تھی ۔ ان کے انتقال کے بعد ان کے بڑے صاحب زادے حشمت دین شہر مزید پڑھیں

محبت مقصد حیات نہیں – الماس چیمہ

میں ایک کالج میں لیکچرار تھی، ان دنوں کمر میں شدید درد تھا تو آرام کی غرض سے چند چھٹیاں لے رکھی تھیں، بچوں کو سکول چھوڑنے کے بعد میں گھر واپس آ کر بنا کوئی کام نمٹائے اپنے کمرے میں آرام کی غرض سے چلی آئی تھی. آنکھیں بند کیے سونے کی کوشش کرنے مزید پڑھیں

معصوم خواہش – توقیرعائشہ

چلیں ابو! میرا بیٹا سر پہ ٹوپی جمائے تیار کھڑا تھا۔ ابو! آج تو میں آپ کے ساتھ صف میں کھڑا ہوں گا۔ اُس نے بڑے اعتماد سے کہا۔ اُس وقت تو اس بات کا مطلب میری سمجھ میں نہیں آیا اور نہ ہی اب اتنا وقت بچا تھا کہ میں اس کے معنی پوچھتا۔ مزید پڑھیں

اعلان – حنا نرجس

عمیر کے چہرے پر نگاہ پڑتے ہی مجھے رات کو دانیال کی طرف سے موصول ہونے والے ایس ایم ایس کی صداقت پر شبہ ہوا مگر اگلے ہی لمحے شہریار کو اپنی کرسی چھوڑ کر اٹھتے، عمیر کے گلے لگتے اور مبارک باد دیتے دیکھ کر شبہ دم توڑ گیا. میں بھی کرسی چھوڑ کر مزید پڑھیں

کل چودھویں کی رات تھی‌ – سائرہ ممتاز

‌ نصف رات گزری اور تارے خوب روشن ہو کر ٹمٹمانے لگے. اگست کے موسم کی حبس ختم ہوچکی تھی اور کراچی کے ساحلوں سے آنے والی ہوا کچھ دور دوڑتے ٹیک آف کی تیاری کرتے ہوائی جہازوں کی اڑان سے ٹکرا کر اس کھلی چھت پر چکر لگاتی پھر رہی تھی، ریڈیو سے احمد مزید پڑھیں

پوری لڑکی، آدھا سپنا – احمد حامدی

گھر میں خاموشی سی ہے۔ ہاں ایک ابو کے کمرے سے ٹی وی کی آواز آ رہی ہے، لیکن مدھم۔ کاشف اپنے کمرے میں بستر پہ نیم دراز دور کہیں یادوں کی وادی میں ہے۔ سوچ رہا ہے کہ وہ ایک کھلے و پُرفضا علاقے میں ہے۔ ہر طرف ہریالی ہے۔ ایک چرواہا ریوڑ ہانکتا مزید پڑھیں

طالع کی ارجمندی – فاطمہ عشرت

اسکول سے واپسی پر جیسے ہی گھر کی دہلیز پار کی تو صحن میں بچھے تخت پر اماں کے پاس دوخواتین کو ساتھ بیٹھے اور گپ شپ کرتے دیکھا. حیا نے چند منٹ کا فاصلہ سیکنڈز میں طے کیا، اور فورا سلام کیا. وہ پہچان گئی تھی، اس کی ہر دل عزیز پھوپھی جان آئی مزید پڑھیں

” بیٹی نامنظور ، نامنظور “- نصرت شمشاد کا دل کو چھوتا اردو افسانہ

وہ سات بہنوں میں پانچویں نمبر پرتھی, گھر میں اس کی حیثیت یورپی ملک میں غیر قانونی طور پر گھس آنے والے سیاہ فام مہاجر جیسی تھی, اس کے بےضرر وجود سے ہر دوسرے فرد کو خوامخواە سا بیر تھا اور یہی اس کی زندگی کے پہلے دور کا سب سے بڑا روگ تھا,پھر اس مزید پڑھیں

میرا پسندیدہ کارٹون کردا- حیا حسین

میرا پسندیدہ کارٹون کردار آج اسکول سے واپسی پر حمزہ کافی پرجوش تھا… جیسے ہی وہ گھر کے اندر داخل ہوا.. اس نے پہلے سب کو سلام کیا… پھر بڑی پھرتی سے اپنے کمرے میں گیا.. بستہ رکھا ، یونیفارم تبدیل کیا… منہ ہاتھ دھوئے… نماز ادا کی… اور کچن میں امی کے پاس آگیا.. مزید پڑھیں

مکافات عمل – ڈاکٹر رابعہ خرم درانی

نہیں نہیں ڈاکٹر صاحب ایسا کیسے ہو سکتا ہے؟ ہماری بیٹی نے تو کبھی آسمان تک نہیں دیکھا، آپ یہ کیا کہہ رہی ہیں؟ اس کا تو چہرہ کبھی سورج نے بھی نہیں دیکھا .. کجا اتنی بڑی بات .. مسز انوار نے تیز سانسوں اور اونچی آواز میں غصے سے کہا.. ڈاکٹر مؤمنہ نے مزید پڑھیں