ڈاکٹر محمد مشتاق احمدڈاکٹر محمد مشتاق احمد بین الاقوامی اسلامی یونی ورسٹی، اسلام آباد میں شریعہ اکیڈمی کے ڈائریکٹر جنرل ہیں، اس سے قبل شعبۂ قانون کے سربراہ تھے۔ ایل ایل ایم کا مقالہ بین الاقوامی قانون میں جنگِ آزادی کے جواز پر، اور پی ایچ ڈی کا مقالہ پاکستانی فوجداری قانون کے بعض پیچیدہ مسائل اسلامی قانون کی روشنی میں حل کرنے کے موضوع پر لکھا۔ افراد کے بجائے قانون کی حکمرانی پر یقین رکھتے ہیں اور جبر کے بجائے علم کے ذریعے تبدیلی کے قائل ہیں۔

کلبھوشن کیس کے فیصلے کی آسان الفاظ میں وضاحت - ڈاکٹر محمد مشتاق احمد

بھارت اور پاکستانی میڈیا کی چیخ و پکار سے پریشان کئی لوگ پوچھ رہے ہیں کہ فیصلے کا مطلب کیا ہوا؟ کون جیتا؟ کون ہارا؟ جو لوگ قانونی پیچیدگیوں میں پڑے بغیر اس فیصلے کو سمجھنا چاہتے ہیں، ان کےلیے چند نکات پیشِ خدمت ہیں: 1۔ پاکستان کا مؤقف تھا کہ عدالت کے پاس اختیارِ سماعت نہیں ہے۔ عدالت نے یہ مؤقف...