لوگ لکھتے کیوں ہیں؟ زبیرمنصوری

بھلا لوگ لکھتے کیوں ہیں؟
کچھ لوگوں کے لیے لکھنا
اظہار ذات ہے، اندر کی شدید طلب ہے،
وہ سمجھتے ہیں لکھا نہیں تو جی بھی نہیں سکیں گے

کچھ کے لیے لکھنا
شہرت اور داد حاصل کرنے کا ذریعہ ہے، واہ واہ، خوب، اچھا، اعلی، استاد محترم، کیا بات ہے، مار ڈالا ظالم نے،
یہ سب جملے، لفظ ان کے لیے آکسیجن کی طرح ضروری اور لازمی ہیں.

کچھ لوگ
بس روزی روٹی کی مشقت کے لیے لکھتے ہیں، فی کالم پیسے ملتے ہیں، کچھ کو صحافت سے، کچھ کو سیاست کے بازار سے (لفظ بازار سے بازار جسم فروشی مراد نہ لی جائے)
کچھ اور ہیں جن کے لکھنے کا کوئی مقصد نہیں، یہ اندھے تیر ہیں۔

اور کچھ وہ بھی ہیں
جن کے لیےلکھنا ایک عظیم کام ہے!
ان کے سامنے بڑے مقاصد ہوتے ہیں، یہ یکسوئی سے ہدف بنا کر لکھتے ہیں، یہ قلم کو تیر و نشتر بناتے ہیں، کمان بنا لیتے ہیں تو کبھی مرہم ،
یہ لفظ لکھتے ہیں جو امر ہو جاتے ہیں، حوالے بنتے ہیں، مثالیں بنتی ہیں.
ان کی تحریریں روح کے سمندروں پر سفر کرتی ہیں اور سکون کے جزیروں میں اترتی ہیں.
ان کے لفظ بنجر پتھریلی زمینوں کے سینے چاک کر کے گل و گلزار بنانے والے بیج بن جاتے ہیں.
یہ لفظ سورج کی کرنیں بن جاتی ہیں جو مرتکز ہو کر خاشاک غیر اللہ کو بھسم کر ڈالتی ہیں.
یہ منہ سے جھڑتے پھول اور کھلتی چٹکتی کلیاں بنتے ہیں.
یہ سنگ میل تحریریں لکھتے ہیں، نشانات منزل تراشتے ہیں، محبتوں کی آبشاریں اور رواں دواں پیہم جواں جذبے تخلیق کرتے ہیں.
نا آسودہ روحوں کو ہمیشہ کی آسودگی سے ہمکنار کرتے ہیں اور زندگیوں کو جذبوں حوصلوں سے بھر دیتے ہیں. انھیں چھوٹے چھوٹے رنگ نسل فرقہ جماعت کے جوہڑوں سے نکال کر باہم جذب ہو کر سمندر بننا سکھاتے ہیں۔
یہی لوگ زمین کا نمک ہیں ورنہ علم، تقوی، قوت اظہار، لاجک، کیا تھا جو شیطان کے پاس نہ تھا؟

کاش کوئی اسے ہر قلم کار تک پہنچا دے.
کاش ہر لکھاری، ہر قلمکار، ہر خامہ بگوش اپنی کٹیگری سوچ لے کہ
مہلت عمل کم سے کم تر ہوتی جاتی ہے۔

Comments

زبیر منصوری

زبیر منصوری

زبیر منصوری نے جامعہ منصورہ سندھ سے علم دین اور جامعہ کراچی سے جرنلزم، اور پبلک ایڈمنسٹریشن کی تعلیم حاصل کی، دو دہائیاں پہلے "قلم قبیلہ" کے ساتھ وابستہ ہوئے۔ ٹرینر اور استاد بھی ہیں. امید محبت بانٹنا، خواب بننا اوربیچنا ان کا مشغلہ ہے۔ اب تک ڈیڑھ لاکھ نوجوانوں کو ورکشاپس کروا چکے ہیں۔

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.