حبل الورید - منزہ احتشام گوندل

وہ دوپہر عام دوپہروں جیسی ہرگز نہیں تھی۔ بلکہ کچھ مختلف، کچھ زیادہ گرم مگر کسی بشارت سے مملو، اور ایک ایسی رات کے بعد کی دوپہر جس رات میں آ سمان چمکدار ستاروں سے جھلملاتا ہو۔ وہ کہتا ہے میں تمہاری شہ رگ سے بھی زیادہ قریب ہوں۔ اتنا قریب ہے۔ اس دن وہ ایک درویش کے روپ میں نہیں تھا بلکہ ایک جوتشی کے...