مشرق کے آنگن میں مغرب - فرحت طاہر

قصہ کچھ یوں ہے کہ ہم نے اپنے گھر کام کرنے والی لڑکی کو سلائی کا ہنر سکھانے کا ارادہ کیا(اسے ہماری بے وقوفی نہ سمجھیں کہ سلائی سیکھ کر وہ ہاتھ کہاں لگے گی! اس مفروضے کے بجائے ہماری دانش مندی کو داد دیں کہ گھر بیٹھے کپڑے سلواسکیں گے ...خیر جناب بچے کے کپڑے سے آغاز ہوا۔اس کے بعد سادے سوٹ کی باری آئی۔...