حکمتیار کی کابل واپسی - زبیر منصوری

دانا آدمی ہے، رکھنے والے نے نام بھی خوب رکھا ”حکمت یار“ کہتے ہیں ریگستان میں طوفان آ جائے تو لوگ اوڑھ لپیٹ کر اوندھے منہ ریت ہی سے چمٹ کر جان بچاتے ہیں. کہتے ہیں حکمت صرف اقدام اور اقدام کا ہی نام نہیں، کبھی دانائی اور پسپائی کا بھی باہمی تعلق بڑا حکیمانہ ہوتا ہے. کہتے ہیں گھاس میں پانی کی طرح رہنا...