حدیث کہانی* *میں جنت جاٶں گا* ام محمد عبداللہ

”امی امی جی!“ کاشف کھیلتے کھیلتے گر گیا تھا۔ گھٹنے پر چوٹ لگ گٸی تھی اور خون بھی نکل آیا تھا۔ امی جی نے دیکھا تو زخم صاف کر کے مرہم پٹی کرنے لگیں۔ کاشف مسلسل ہاٸے واٸے کرتا جا رہا تھا۔ ”بس کرو کاشف بیٹے! یہ دنیا ہے یہاں تو انسان گرتا بھی ہے اور چوٹ بھی لگتی ہے، البتہ جنت میں جتنا چاہو کھیلنا نہ گرو...