ہاری کی فصل اور بیٹی کے جھمکے - فاروق حیدر

ابو ابو ....اس بار تو آپ کا وعدہ ہے نا ! پچھلے سال بھی آپ نے ٹال دیا تھا..\nایک ڈھلتی شام تھکا ماندہ ہاری گھر پہنچا تو چھوٹی بیٹی نے ننھے منے بازو باپ کی گردن میں حمائل کر دیے.\nضرور بیٹا ... میں اس بار اپنی بیٹی کو ضرور سونے کے بندے دلواؤں گا\nاس نے پیار بھرے انداز میں جواب دیا اور اپنے کھردرے...