چھینک مارتے ہوئے ہماری آنکھیں بند کیوں ہو جاتی ہیں؟

چھینک ایسی چیز ہے جس سے کوئی بھی بچ نہیں سکتا، بس سردی، الرجی یا مٹی ناک میں گھستی ہے اور ایک سیکنڈ سے بھی وقت میں ناک کی رطوبت کے پانچ ہزار قطرے سو میل فی گھنٹہ کی رفتار سے خارج کردیتی ہے۔ یہ خارج ہونے والے ذرات لگ بھگ تیس فٹ تک سفر کرسکتے ہیں اور ہوا میں دس منٹ تک رہ سکتے ہیں جو کہ وہاں سے گزرنے...