قربانی کا فلسفہ - قدسیہ ملک

یہ غالباً 90ء کی بات ہے جب کراچی ایک تنظیم کے ہاتھوں پوری طرح یرغمال بنا ہوا تھا، یہاں آگ و خون کی ہولی کھیلی جارہی تھی، آئے روز جوان لاشے اٹھتے۔ دیکھنے والے بتاتے ہیں ہم ایک جنازے سے واپس آتے تھے کہ دوسرے کی اطلاع آجاتی اور ہم یہی سمجھتے تھے کہ شاید ہمارا کام ہی جنازوں کو کاندھے دینا ہے۔ سیاستدان...

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
/* ]]> */