جُتی قصوری - سائرہ ممتاز

زبیدہ خاتون اکیلی دکیلی چار کمروں کے گھر میں رہتی تھی، جس کا صحن سات آٹھ مرلے جتنا تو رہا ہوگا. بال سفید ہوئے بھی زمانے بیت چکے تھے، مگر مائی ہڈ کاٹھ کی تگڑی تھی. یہ سرو جتنا لمبا قد اور پھرتیلا جسم، مائی کہیں سے بھی سن رسیدہ نہیں لگتی تھی، لیکن اسے دیکھتے ہوئے زہرا جیسی تین نسلیں جوان ہو چکی تھیں...