کاش میں بےگناہ ثابت نہ ہوتا - ڈاکٹر رضی الاسلام ندوی

رہائی پاکر میں جیل سے باہر آیا تو بڑے بھائی میرا انتظار کر رہے تھے۔ انھوں نے بڑے پیار سے مجھے گلے لگایا اور گاڑی میں بٹھایا۔ گاڑی روانہ ہوئی اور میں ماضی کی یادوں میں کھو گیا۔ گاؤں میں تعلیم کا بالکل ماحول نہ تھا۔ بچے کم عمری ہی میں کمانے کے لیے گھر سے نکل جاتے تھے۔ ابا کو تعلیم دلانے کا بہت شوق...