احتساب کا ڈرامہ - ابو محمد مصعب

ہے تو لطیفہ مگر بات سمجھنے کے لیے سن لیتے ہیں۔ " کسی فقیر نے کسی باریش مرد سے خیرات مانگی۔ اس نے جواب دیا کہ میں اپنی ڈاڑھی پر ہاتھ پھیرتا ہوں، جتنے بال میری مُٹھی میں آئیں گے اتنے سِکّے تجھے خیرات میں دوں گا۔ پھر اس نے نرم سی مٹھی بنا کر اپنی ڈاڑھی پر ہاتھ پھیرا تو ایک بھی بال ہاتھ میں نہیں آیا۔...