زارا مظہرزارا مظہر نے اردو میں ماسٹرز کیا ہے، شاعری سے شغف ہے۔ دل میں چھوٹے چھوٹے محسوسات کا اژدھام ہے جو سینے جو بوجھل پن کا شکار رکھتا ہے، بڑے لوگوں کی طرح اظہاریہ ممکن نہیں، مگر اپنی کوشش کرتی ہیں۔ دلیل کی مستقل لکھاری ہیں

بٹ خیلے کا ندیم ولی - زارا مظہر

کیت کیت کیت ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ بھور سمے ریشم جاناں کی کانوں کو چھیدتی آواز سارے نئے نویلے جوڑوں کے لیے اذّیت اور نیند میں خلل کا باعث بن جاتی مگر اسے مطلق پرواہ نہ ہوتی۔ دونوں لائنوں کے گھروں سے اکٹھی کی گئی روٹیاں وہ رات پانی میں بھگو دیتی اور صبح اٹھتے ہی اس کا پہلا کام ڈربے میں سے رات بھر کی بھوکی...

error: اس صفحے کو شیئر کیجیے!