منتخب کالم

فیس بک پروفائل ٹوئٹر پروفائل
سبسکرائب کریں
X

سبسکرائب کریں

E-mail :*

عدالتی فیصلہ اور سول بالادستی کا ڈھول| نصرت جاوید

یہ”معجزہ“ بھی صرف مملکت خداداد میں برپا ہو سکتا تھا کہ اس کی اعلیٰ ترین عدالت کئی ہفتوں تک روزانہ کی بنیاد پر سماعت اور بعدازاں ایک جان لیوا انتظار کے بعد کوئی فیصلہ سنائے ا ور دستاویزاتِ پانامہ کے منکشف ہونے کی وجہ سے اُٹھے طوفان سے متعلق تمام فریقین اسے اپنی فتح سمجھیں۔ مزید پڑھیں