چند بیماریاں، غذا کے ذریعے آسان علاج - بشریٰ نواز

جب ہم بیمار ہوتے ہیں تو سب سے پہلے ہمارا دھیان ڈاکٹر اور دوا کی طرف جاتا ہے۔ بعض دوائیں ایسی ہوتی ہیں جن سے انسان فائدے کی بجائے نقصان سے دوچار ہوجاتا ہے۔ کچھ دوائیں ایسی ہوتیں ہیں جن کے کھانے سے منہ پک جاتا ہے اور پیٹ خراب ہوجاتا ہے۔ بعض اوقات کچھ دوائیوں سے جلد بھی متاثر ہوتی ہے، کائنات بنانے والے مالک نے ہمارے لیے بہت ساری غذاؤں میں بھی شفا رکھی ہے، جن میں پھل اور سبزیاں دونوں ہی شامل ہیں۔ کچھ غذائیں دوا سے بھی زیادہ جلدی ہماری صحت کی بحالی میں مدد کرتی ہیں۔

آج کل فاسٹ فوڈ ہماری زندگی کا حصہ بن چکا ہے۔ ہر کوئی اسے شوق سے کھاتا ہے۔ اس میں شامل اجزا ہمارے معدے میں گیس اور بھاری پن پیدا کردیتا ہے۔ اس کے ازالے کے لیےایک لیموں ایک گلاس پانی میں نچوڑ کر پینے سے سکون حاصل کیا جاسکتا ہے۔ دہی بھی صحت کے لیے نہایت مفید ہے۔ اس میں probiotic نامی جراثیم ہوتے ہیں جو ہمارے اندرونی نظام کو درست رکھتا ہے۔ دہی کا استعمال دوائیوں کے سائیڈ افیکٹس سے محفوظ رکھتا ہے۔

دنیا بھر میں ڈپریشن کا مرض عام ہوچکا ہے۔ اس مرض سے بچاؤ کے لیے لوگ ہزاروں روپے کی دوائیں استعمال کرتے ہیں۔ لیکن کبھی اس سے بھی فرق نہیں پڑتا۔ ڈپریشن دور کرنے کے لیے بہترین مشروب ہے coffee۔ کیا مرد کیا خوا تین سب ہی بہترین اور چمکدار جلد پسند کرتے ہیں۔ اگر جلد پھولی ہوئی محسوس ہو تو skin specialist کے پاس جانے کی ضرورت نہیں۔ آپ کچھ عرصہ سبز چائے کا استعمال کریں۔

بعض اوقات نیند نہیں آتی۔ اس کی کئی وجوہات ہو سکتی ہیں اور نیند کا نا آنا ہی بہت سی بیماریوں کو جنم دیتا ہے۔ اگر نیند کی دوا لینے لگیں تو یہ عادت بن جاتی ہے اور پھر ایسا بھی ہوتا ہے کہ دوا کھانے کے بغیر ہمیں نیند نہیں آتی۔ اس کا حل ماہرین نے kiwi فروٹ کی شکل میں نکالا ہے۔ اس پھل میں نیند پیدا کرنے والےserotonen neuro transmeter کی تعداد بڑھا دیتا ہے اور کیوی کھانے سے اچھی نیند خاصل کی جاسکتی ہے۔ آدھے سر کا درد جسے درد شقیقہ بھی کہا جاتا ہے، ایک تکلیف دہ مرض ہے۔

ڈاکٹروں کا خیال ہے کہ انسانی جسم میں میگنیشیئم کی کمی کی وجہ سے یہ مرض پیدا ہوتا ہے لہٰذا ایسی غذاؤں کا استعمال کیا جائے جس میں میگنیشیئم زیادہ مقدار میں موجود ہو جیسے کہ پھلیاں یا خشک میوہ جات۔ ایک مسئلہ بڑھتی عمر کے ساتھ نظر کی خرابی کا بھی ہے۔ جیسے جیسے عمر بڑھتی جاتی ہے، نظر دھندلاتی جاتی ہے۔ گوبھی، پالک، سلاد اور دیگر سبز پتوں والی غذائیں کھانے سے یہ عمل سست یا ختم ہوجاتا ہے۔ کمزور اعصاب کے مالک روزانہ ایک سیب چھلکے سمیت کھائیں۔ سیب میں ursolic ایسڈ پایا جاتا ہے۔ یہ اعصاب کی نشوونما میں مدد دیتا ہے۔

گلہ خراب ہو یا کھانسی اس کا علاج سنت نبویؐ میں موجود ہے۔ شہد ہمارے نبی کریمؐ کی پسندیدہ غذا تھی۔ شہد میں موجود جراثیم کش خصوصیات اسے بہترین اور فائدے مند غذا بنا دیتی ہے۔ ایک پیالی نیم گرم پانی میں دو چمچ شہد ملاکر پینے سے کھانسی جیسے ظالم مرض سے نجات مل سکتی ہے۔

کچی سبزیاں جیسے مولی گاجر چقندر پیاز ٹماٹر کھیرا ان کی سلاد بنا کر کھانے سے نظام ہضم ٹھیک رہتا ہے اور کسی دوا کی ضرورت نہیں رہتی۔ اگر معدے کی خرابی کی وجہ سے منہ میں چھالے ہوجائیں تو کوئی بھی دوائی کھانے کی بجائے دو چار بار تربوز کھانے سے منہ کے چھالےختم ہو جاتے ہیں۔

بعض دفعہ تھکاوٹ سے یا کوئی وزنی کام کرنے سے جسم میں کھچاؤ پیدا ہوجاتا ہے جس کی وجہ سے اٹھنا بیٹھنا دوبھر ہو جاتا ہے۔ ایسے میں ادرک کا استعمال جسم کے پٹھے نرم کرنے میں مدد دیتا ہے۔ اس کی چائے بناکر پیئں یا اس کو بھون کر سالن کی شکل میں کھائیں۔ کھانے سے جلدی آرام محسوس ہوگا، ادرک میں شامل gingereols انسانی جسم میں سوزش کم کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔

جب انسانی جسم میں پروٹین اور کولاجن کم ہوجائے، تو جلد سخت ہو جاتی ہے اور پھر اس پر جھریاں پڑنے لگتی ہیں۔ وٹامن سی ہی کولاجن پیدا کرتا ہے۔ ہمیں اپنی جلد کی بہتری کے لیے وٹامن سی سے بھرپور غذائیں استعمال کرنی چاہیے۔ جیسے کنو، مالٹا، امرود، لیموں، شکرقندی، لیچی وغیرہ۔ ان میں وٹامن سی کافی مقدار میں موجود ہوتا ہے۔

اپنی روزمرہ کی زندگی میں ان چیزوں کو اہمیت دیں تاکہ ہم کم سےکم بیمار ہوں۔ اپنی زندگی میں علاج بالغذا کو اہمیت دیں۔

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
/* ]]> */