عید الاضحی اور رجوع الی اللہ - حافظہ سویرا خان

ہرمذہب کے خاص تہور ہوتے اور مسلمانوں کے خاص دو تہوار ہیں عید لفطر عید الضحی دنیا بھر میں مسلمان اپنے تہوار بہت جوش خروش سے مناتے ہیں کیونکہ ہے اللہ کی طرف سے دیئے گئے انعام ہیں عید کے لیے لوگ بہت خاص اہتمام کرتے ہیں اور تیاریاں کرتے ہیں یہ دن بہت ہنسی خوشی کے ساتھ منائے جاتے لیکن اس دفعہ عید اس وقت آئی جب ہر مسلمان خوف و ہراس میں مبتلا ہےاس مرض نے ہر کسی کو اپنے خوف میں مبتلا کیا ہوا ہے۔

لوگ اپنے گھروں میں بند ہیں ایک دوسرے سے ملنا تو دور کی بات ہاتھ ملانے تک ڈرتے ہیں ہمیں اس کی سزا مل رہی ہے کہ جب ہماری کشمیری بہن بھائیوں پر ظلم ہوتا تھا تو وہ چپ چاپ بیٹھے دیکھتے رہتے تھے اور ہاتھ اٹھانے تک ہماری ہمت نہیں ہوتی تھی ہاتھ تو دور کی بات ہم ان کے حق میں بول بھی نہیں سکتے تھےکشمیریوں کے وہاں پر بچے کاٹے جا رہے تھے نوجوان کٹ رہے تھے اور ہم لوگ یہاں پہ ہاتھ دھرے تماشائی بنے بیٹھے تھےان کے دکھ میں کوئی بھی شریک ہونے والا نہیں تھایہ ہمیں اسی چیز کی سزا مل رہی ہے کہ مسلمان ایک دوسرے کو ہاتھ ہاتھ میں نہیں ملا سکتےاب دوسری بات یہ ہے کہ ہمارے مسلمانوں میں بے بی حیائی عام ہو گئی تھی انسان اپنے آپ کو خدا سمجھ بیٹھا تھا ہمارے معاشرے کی لڑکیاں ننگی سرعام ناچتی تھی اور ہم خدا کو ناراض کر بیٹھے سےیہ بھول گئی تھی کہ ایک دن انصاف کے آنا ہے ۔

اور وہ خدا بھی ہے جو ہر کسی کے ساتھ انصاف کرنے والا ہے اور یہ یہ کشمیریوں کیاا ہیں جو آج ہم بھگت رہے ہیں جس کی سزا ہم مل رہی ہےاپنےاپ کو خدا سمجھنے والے انسانوں نے بھی بہت زیادہ کوششیں کیں لیکن اس کا کوئی ناحل نکال سکےاس مرض سے ابھی تک جان نہی چھوڑا سکے اگر آج مسلمان مشکل میں ہے تو اس کے اپنے ہی عملوں کی سزا ہے ابھی بھی ہمارے پاس وقت ہے ہمیں ابھی بھی اللہ کی طرف لوٹ آنا چاہیے اور اسی کی طرف رجوع کرلینااور ہمیں اللہ کے حضور توبہ کرنی چاہیے کہ اللہ ہمیں اس مشکل سے بچا لے کر ہمیں اپنا بنا لے اور ہم سے راضی ہوجا شاید کہ اللہ ہمیں معاف اللہکر دے اللہ ستر ماؤں سے بھی بڑھ کے پیار کرنے والا ہے ۔

وہ تو معاف کرنے والا ہے اور آج ہم بھی اس موذی مرض سے لڑ رہے ہیں کہ ہمارے گناہ زیادہ ہوگئے اور ہمارا اللہ ہم سے ناراض ہو گیا اللہ تعالی نے یہ مرض ہیاسی لییے بھیجی ہے تاکہ انسان جان سکے کہ ایک ایسی ہستی ہے جو ہر کسی کے ساتھ انصاف کرنے والی ہے اور اس ہستی کو جان سکے تاکہ انسان جان لیں کہ وہ کس راستے پر چل رہا ہے ابھی بھی ہمارے پاس وقت ہے ہمیں اللہ کی طرف لوٹ جانا چاہیے اے اللہ موذی مرض سے نجات عطا فرما آمین اور مسلمانوں کو بچا آئے اور ہمارے گناہوں کو معاف فرما دے آمین

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
/* ]]> */