رمضان پاکستان اور قرآن - بنت رضا

بٹ کے رہے گا ہندوستان

لے کے رہیں گے پاکستان

پاکستان کا مطلب کیا ؟؟؟

لا الہ الا اللہ محمد رسول اللہ

یہ صرف اک نعرہ نہیں تھا بلک اک منشور اک نظریہ تھا جس کی بنیاد پر ہندوستان کا ہر بوڑھا بچہ اور جوان نکلا جس کی مثال ماضی میں بہت کم ہی نظر آتی ہے - نہتے اور کمزور مسلمان طاقتور کفار کے آگے ڈٹ گئے ، قوت ایمانی سے لبریز۔اللہ کی یہ سنت رہی ہے کہ مومنین کے لئے رمضان کو مبشرات سے بھر دیا ہے ۔ ذرا تاریخ پر نظر ڈالیں قرآن کا نزول، جنگ بدر کی ناقابل یقین فتح ، فتح مکہ اور ھمارا پیارا پاکستان، ان سب کی مماثلت کیا ہے ؟؟ صرف اور صرف اسلام ! اور پاکستان اور نزول قران میں تو شب قدر کی مماثلت محض اتفاق نہیں اللہ کی نشانیوں میں سے اک نشانی ہے۔ اللہ کا دین بچانے اور پھیلانے کو جو نکلتا ہے اللہ اس کو زمین سے بھی اور آسمان سے بھی خزانے عطا کرتا ہے مایوس نہیں کرتا اس کی واضح مثال مملکت خداداد پاکستان ہے ، برطانوی حکومت اور ہندوؤں نے خوب سوچ سمجھ کر ہندوستان کے بنجر اور بے کار علاقے مسلمانون کو دئے مگر اس منشور کی برکت سے کوئلہ سے لے کر نمک اور سونا ساری معدنیات کے خزانے اور سال کے چاروں بہترین موسم یہ سب کیا ہے ؟

برکتیں رحمتین مگر آج پاکستان کہاں ہے ؟؟ آج اگر ہم نے قرآن کا حق ادا نہیں کیا اور اسکی قدر نہیں کی تو قرآن قیامت میں اللہ سے ھماری شکایت کرے گا کہ مجھے (مہجور ) چھوڑ دیا تو اسی قرآن کی ناقدری کی وجہ سے کیا ہوا؟
"وہ امن اطمینان کی زندگی بسر کررہی تھی اور ہر طرف سے بفراغت رزق پہنچ رہا تھا کہ اس نے اللہ کی نعمتون کا کفران شروع کردیا تب اللہ نے اس کے باشندوں کو ان کے کرتوتوں کا مزا چکھایا کہ بھوک اور خوف کی مصیبتیں ان پر چھا گیئں "(القرآن سورۃ النحل)

آج ہمارا حال اسی کی تفسیر بنا ہوا ہے الا مان الحفیظ !!"ومن عرض عن ذکری فان لہ معیشتہ ضنکا ونحشرہ"جو میرے ذکر (قرآن) سے منہ موڑنے گا اس کےلئے دنیا میں زندگی تنگ ہوگی " (القرآن سورۃ طہ)قرآن کے تعلق کی بنیاد پر اللہ نے نا ممکن کو ممکن بنایا اور آج اسی تعلق کی کمزوری ہمیں کیا کیا دکھا رہی ہے آج کا رمضان آج کی شب قدر ہم سب سے بہت کچھ کہہ رہی ہے۔

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com