کروناوائرس کیوں ہوتا ہے، بچاؤ کیسے ممکن

کراچی : پروفیسر ڈاؤیونیورسٹی ڈاکٹر سعیدخان کا کہنا ہے کہ کروناوائرس فلو ،بخار جیسے علامات کسی بھی وجہ یا الرجی سے بھی ہوتا ہے ، اس سے بچنے کیلئے اچھی غذا لیں ، ہاتھ بار بار دھوئیں، منہ کو ڈھانپیں۔تفصیلات کے مطابق پروفیسر ڈاؤیونیورسٹی ڈاکٹر سعیدخان نے اے آر وائی کے پروگرام با خبر سویرا میں گفتگو کرتے ہوئے کہا چین میں موجود کروناوائرس کی نئی قسم ہے اور یہ وائرس جانوروں سے انسانوں میں منتقل ہوتا ہے۔

پروفیسرڈاکٹرسعیدخان کا کہنا تھا کہ اس وائرس سے100میں سے 2یا3لوگوں کی موت واقع ہوتی ہے ، یہ وائرس بوڑھوں یا بچوں کو زیادہ متاثر کرتاہے، مریض کی صحت بہتر ہوتو اس وائرس کامقابلہ کیا جا سکتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ کروناوائرس کے مریضوں میں علامات بھی عام سی ہیں، فلو ،بخار جیسے علامات کسی بھی وجہ یا الرجی سے بھی ہوتا ہے ، کرونا وائرس سے بچنے کیلئے اچھی غذا لیں ، ہاتھ بار بار دھوئیں، منہ کو ڈھانپیں۔

خیال رہے چین کےصوبے ہوبئےمیں کروناوائرس سےمزید اڑتیس افرادہلاک ہوگئے،جس کےبعد مرنیوا لوں کی تعداد 170 ہوگئی، سب سےزیادہ ہلاکتیں ووہان میں ہوئیں، ساڑھے 7 ہزار سےزائد افراد میں وائرس کی تصدیق ہو چکی ہے جبکہ دیگرپندرہ ملکوں میں کرونا وائر س کےاڑسٹھ مریضو ں کاانکشاف ہواہے۔

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
/* ]]> */