ہمیں فخر ہے - شہلا خضر

ہمیں فخر ہے اپنی انمول سرزمین پر، جس کی بنیادوں میں ان گنت آزادی کے متوالوں کے خون کی آبیاری، ان گنت بہنوں اور بیٹیوں کی ردائیں، اور جوانوں کے لاشے مدفون ہیں۔ آج بہترسال ہونے کے باوجود ان کا غم اپنے سینوں میں محسوس کرتے ہیں۔ یہ آزاد فضائیں جو ہمیں ورثے میں ملی ہیں، انہی لازوال پیکر عزم و وفا کے مرہو ن منت ہیں۔

ہم انہیں خراج تحسین پیش کرتے ہیں، آج ہم اس پاک وطن میں ایک ماں کے آغوش جیسا سکون و اطمینان محسوس کرتے ہیں۔ دنیا کے کسی بھی کونے میں چلے جائیں اپنے وطن ہی میں دل کا چین میسر آتا ہے۔ یہ آزاد فضائیں ہر پل ہمیں یاد دلاتی ہیں کہ اس خطۂ زمین کو حاصل کرنے کے لیے ہمارے اسلاف نے انتھک جدوجہد اور بےمثال قربانیاں دیں۔

ہمیں فخر ہے اپنے بزرگوں پر جنھوں نے بے دریغ اپنی اولادوں اور گھر بار کو قربان کیا اور صحیح معنوں میں آگ اور خون کا دریا پار کر کے اس وطن کی بنیاد رکھی۔ ہمیں فخر ہے اپنے قائدین پر جنھوں نے سیاسی محاذ پر ڈٹ کر ہندو ازم کا پامردی سے مقابلہ کیا، اور انفرادی اسلامی نظریے کی بنیاد پر علیحدہ وطن حاصل کر کے دم لیا۔

۱۴اگست تجدید وفا کا دن ہے۔ ان سب محسنین کے ساتھ جن کی بدولت ہم سر اٹھا کر اپنے وطن میں جی رہے ہیں۔ اے مالک کائنات، تمام شہدائے وطن کی بہترین مغفرت فرمائیں، اور ہمیں بھی ان کے جیسا عزم وہمت عطا فرما ئیں، جس کی بدولت ہم پاکستان کو ترقی اور خوشحالی کی بلندیوں پر لے جا سکیں۔

میرے عزیز ہم وطنو! پاکستان تمام قدرتی وسائل سے بھی مالا مال ہے اور ہماری قوم بھی بے انتہا محنتی اور جفا کش ہے، اس وقت کمی ہے تو صرف ایک مخلص قیادت کی جو رہنمائی اور رہبری کا حق ادا کرنے والی ہو۔ ہم سب پاکستان کے لیے دعاگو ہیں کہ اللہ تعالی ہمارے وطن کو بام عروج پر لے جائے اور اسے رہتی دنیا تک قائم ودائم رکھے۔ آمین