راہ - حنا نرجس

جب قلم لکھنے سے انکاری ہو گیا... کاغذ نے خود کو تختہ مشق نہ بننے دیا... انگلیوں نے ٹائپ کرنے سے معذرت کر لی... کی بورڈ، موبائل سکرین کا ساتھ دیتے ہوئے جام ہو گیا... تو دل سے ان انمول انوکھے جذبات کی بے قدری دیکھی نہ گئی... تین بار تیز تیز دھڑک کر اسے متوجہ کیا اور کہنے لگا،

"پریشان کیوں ہوتی ہو، میں ہوں نا، مجھ پر لکھ لو." " لیکن... لیکن... لکھوں کیسے..؟ نہ قلم چل رہا ہے، نہ کی بورڈ..." ... " ضرورت بھی نہیں ان سب کی. تم بولو، میں سن رہا ہوں." "بولا بھی نہیں جا رہا نا... زبان ساتھ نہیں دے رہی..." "اوہ نو..! اچھا ایسا کرو، سرگوشی میں کہو سب. میں سیٹنگز چینج کرتا ہوں، جو وِسپَر کرو گی، مجھ پر لکھا جائے گا سطر بہ سطر." اس نے آنکھیں موندیں، چند لمحے انتظار کیا، پھر دھیرے دھیرے کہنا شروع کیا... کچھ بھی نہ چھپایا... سب جذبے آشکار کر دیے... سب توقعات لکھ ڈالیں... سب خواہشات کو زبان دے دی... سب احساسات شیئر کر دیے... وہ خاموش ہوئی تو دل بولا، "سب محفوظ ہو گیا، اب خوش ہو نا؟" "ہاں، ایک نظر دیکھنا چاہوں گی." "گردن جھکاؤ اور دیکھ لو،" دل نے اپنا آپ کھول ڈالا. "لیکن مجھے تو کچھ بھی لکھا نظر نہیں آ رہا." "اوہ، میں بھول گیا. جب قلم، انگلیاں، کاغذ، زبان کچھ بھی ساتھ نہیں دے رہا تو آنکھیں کیوں کر دیں گی بھلا؟ مان بھی جاتیں تو یہ عام الفاظ تو ہیں نہیں، ان آنکھوں سے نہیں دِکھیں گے." "پھر..؟" "پھر یہ کہ میں ایک بار پھر سیٹنگز چینج کر کے الفاظ بند آنکھوں کے لیے وِیزِبل کر دیتا ہوں. آنکھیں بند کرو تو تمہیں دِکھنے لگیں گے."

"زبردست! تم کتنے اچھے ہو. کتنی خوبصورتی سے سب ریکارڈ کر ڈالا،" لفظ بہ لفظ پڑھتے ہوئے وہ بولی، "تم سب سے اچھے دوست ہو میرے. کوئی ساتھ دے نہ دے، تم ہمیشہ میرے رہتے ہو. سو فیصد میرے." "تمہاری خوشی میرا سکون ہے نا." "اچھا اب یہ اُس تک کیسے پہنچیں گے؟ روایتی ذرائع تو کام نہیں آئیں گے،" وہ پھر پریشان ہوئی. "یہ بتاؤ کیا دل کو دل سے راہ ہوتی ہے؟" "ہاں... سنا تو ہے... مگر..." امید کے دیے لمحہ بھر کو روشن ہوئے، پھر معدوم ہو گئے. دل اس کے یقین و بے یقینی کے بیچ ڈولنے پر مسکرایا، "اُسی راہ سے بھیجوں گا." "مگر اُس کے لیے پڑھنا تو ممکن نہیں ہو گا... یہ عام الفاظ تو ہیں نہیں..." اس نے دل ہی کی کہی بات دہرائی. "پڑھنے کی ضرورت بھی نہیں. یہ جذبات و احساسات کی فائل ہے، براہ راست اس کے دل میں ڈاؤن لوڈ ہو جائے گی. دیکھو، کمیونیکیشن چاہتی ہو نا تم؟ بھرپور طریقے سے ہو جائے گا، بے فکر رہو، بس مجھ پر یقین رکھو."
"تم پر تو یقین ہے مجھے." دل فائل پروسس کرنے لگا. اس نے ہلکے پھلکے ہو کر کلمہ شکر ادا کیا اور جوابی فائل کا انتظار کرنے لگی.

ٹیگز

Comments

حنا نرجس

حنا نرجس

اللّٰہ رب العزت سے شدید محبت کرتی ہیں. ہر ایک کے ساتھ مخلص ہیں. مسلسل پڑھنے پڑھانے اور سیکھنے سکھانے پر یقین رکھتی ہیں. سائنس، ٹیکنالوجی، ادب، طب اور گھر داری میں دلچسپی ہے. ذہین اور با حیا لوگوں سے بہت جلد متاثر ہوتی ہیں.

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.