حسن کردار سے تُو نور مجسم ہوجا ! محمودزکی

سوشل میڈیا اور آن لائن میڈیم کی ترقی نے جہاں ہمارے لیے بہت سی سہولیات فراہم کی ہیں وہاں اس کے بے دریغ استعمال نے ہماری نجی زندگی اور اخلاقیات پر بہت برا اثر چھوڑا ہے. چونکہ یہ دو طرفہ روابط اور کمیونیکیشن کا ایک تیز رفتار زریعہ ہے تو اس لیے ہمارا رویہ, اخلاق اور اس میڈیم پر ہماری موجودگی ہمارے ذہنی و اخلاقی پس منظر کے بارے میں بہت کچھ بتاتی ہے, عموما حقیقی زندگی میں ہم کچھ معاشرتی اصول و قواعد کے تحت زندگی گزارتے ہیں لیکن "ورچوئل ریالٹی" میں آتے ہی ہم ان اصول و قواعد کو بالائے طاق رکھ کر وہ کچھ کر جاتے ہیں جو دوسرے استعمال کنندہ گان پر بہت گراں گزرتا ہے.

Netiquettes جو کہ دو الفاظ نیٹ اور ایٹیکیٹ یعنی آداب کا مجموعہ ہے ایسے ہی کچھ اخلاقی تقاضوں پر مشتمل ایک رہنما ہے جس پر عمل پیرا ہو کر ہم اس میڈیم میں ایک مثبت رول ادا کر سکتے ہیں.
1: Remember the human
ورچوئل ریالٹی (جس میں فزیکلی وہ بندہ موجود نہ ہو) میں بھی انسانی احساسات کا احترام اتنا ہی اہم ہے جتنا حقیقی زندگی میں ہے کیونکہ دوسری طرف بھی انسان ہی ہیں جن پر آپ کے سٹیٹس/پوسٹ/کمنٹس کا اثر پڑتا ہے, اس لیے حتی الامکان کسی کی دل آزاری سے بچنا چاہیے.
2: Same standard as in reality
آن لائن میڈیم میں بھی وہی معیارات اپنانے چاہییں جو حقیقی زندگی میں اپناتے ہیں, دوہرا معیار منافقوں کا وطیرہ ہے.
3: know your space in cyberspace
انٹرنیٹ کی دنیا میں اپنے مقام کا تعین بہت ضروری ہے کہ ہم کہاں پر کھڑے ہیں اور جو چیز ہم استعمال کر رہے ہیں اس کے استعمال کے کیا تقاضے ہیں, کسی دوست کے ساتھ انفرادی چیٹنگ اور کسی پبلک فورم پر ویسی ہی بات چیت کرنے میں بڑا فرق ہے اس لیے پتہ ہونا چاہیے کہ ہم سائبر ورلڈ میں کہاں ہے.
4: Respect others people's time and bandwidth

یہ بھی پڑھیں:   باقی سب کون ہیں ؟ - اسماء طارق

غیر ضروری/غیر متعلقہ چیزیں بھیج کر یا ان فورمز پر ڈال کر دوسرے لوگوں کے وقت اور بینڈ وِدتھ (ڈیٹا کی مقدار) کے ضیاع سے اجتناب کیا جائے.
5: Make yourself look good online
حقیقی زندگی میں ہم جس طرح خیال رکھتے ہیں کہ ہماری زبان و بیان شائستہ ہو, لباس اور انداز اچھا ہو تا کہ ہماری شخصیت لوگوں کو متاثر کرے, ویسے ہی سوشل میڈیا پر بھی زبان و بیان کی شائستگی ملحوظ خاطر رہے, اچھی اور معیاری چیزیں نشر کی جائیں تا کہ ہماری شخصیت کا اچھا پہلو اجاگر ہو.
6: Share expert knowledge
بہت سی ایسی چیزیں اور مسائل ہوتے ہیں جس کے بارے میں ہمیں دوسروں سے زیادہ آگاہی ہوتی ہے, اپنی ایسی معلومات کو اپنے تک رکھنے کی بجائے لوگوں کے استفادے کے لیے نشر کرنی چاہیے.
7: Help keep flam wars under control
سوشل میڈیا پر عموما ایک متنازعہ پوسٹ/کمنٹ سے ایک لامتناہی غیر ضروری ابحاث کا سلسلہ شروع ہوجاتا ہے حالانکہ ہم اس پوسٹ کمنٹ کو نظر انداز کرکے بخوبی ان فضول ابحاث میں وقت کے ضیاع سے بچ سکتے ہیں.

8: Be forgiving of other people's mistakes
غلطیوں سے صرف نظر کرنا ایک اچھے انسان کی خوبی ہے اور ان غلطیوں کو اچھالنا بلا شبہ ایک قبیح فعل ہے, سوشل میڈیا پر اگر کوئی غلطی کرتا ہے تو اس کی عزت کا تماشہ بنانے کے بجائے اس کو رازداری کے ساتھ اس غلطی پر آگاہ کرنا چاہیے.
9: Respect other people's privacy
سوشل میڈیا کا ایک نقصان یہ بھی ہوا کہ اب ہماری انتہائی نجی سرگرمیاں بھی اس بازار کی رونق بن گئی ہیں' ضروری و غیر ضروری ہمہ اقسام کی سرگرمیاں یہاں پر نشر کی جاتی ہیں جس نے پرائیویسی کو بہت حد تک نقصان پہنچایا ہے, ہمارا اخلاقی فرض ہے کہ دوسروں کی سرگرمیوں کی جاسوسی کرنے اور ٹوہ میں لگنے سے اجتناب کیا جائے.