کیا عشق یہ ہے ؟- بنت طاہر قریشی

آج صبح واٹس ایپ پر مجھے کسی نے 2 منٹ کی ایک ویڈیو سینڈ کی... مجھے نہیں پتہ کہ وہ کس شہر کے "عاشقان رسول "کی ہے...ممکن ہوتا تو میں ویڈیو شیئر کرتی... ویڈیو میں دکھایا گیا کہ ایک تین منزلہ ہرا اور سفید کیک جسے ایک بغیر قمیص والے بابا جی جن کے اردگرد 50,60 "عاشقان رسول "دائرے کی شکل میں موجود تھے,,کاٹ رہے تھے- بابا جی نے جیسے ہی کیک کاٹنا شروع کیا. .اردگرد موجود"عشاق نے باقائدہ تالیاں بجاتے ہوئے"ہیپی برتھ ڈے یا رسول اللہ "گنگنانا شروع کردیا... ویڈیو دیکھ کر کچھ لمحے کے لئے اس "عظیم عشق "کے مظاہرے پر میں گنگ رہ گئ...سمجھ نہ آئی کہ میں اس بے ادبی پر ہنسوں یا روؤں؟؟؟ یہ کیسا عشق ہے...جسمیں معشوق کے احکامات کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے اور پھر بھی مصر ہیں "عاشقان رسول " کہلوانے پر... میں نے کہیں عربی کا شعر پڑھا تھا... جسکا ترجمہ ہے.. ""عشق سارا کا سارا "ادب"ہے...."" یعنی عاشق صادق بننا ہے تو پہلے ادب سیکھنا ہوگا,, مؤدب بننا ہوگا ہر سال " عشق مصطفی " کے نام پر نت نئ بدعات ایجاد کی جارہی ہیں.... کوئی ہے ہی نہیں جو انکو روک سکے....جو انکو بتاسکے کہ "محبوب خدا صلی اللہ علیہ وسلم" کا عشق دراصل ہے کیا...یہ تو عشق مصطفی کے نام پر "شیطان کی پیروکاری" کررہے ہیں...شیطان کی فرمانبرداری کر رہے ہیں... انکو احساس ہی نہیں کہ اپنی حرکتوں کی وجہ سے نبی المحم صلی اللہ علیہ وسلم کی محبت نہیں انکا غضب حاصل کر رہے ہیں.

انکے احکامات کی نافرمانی کرکے جہنم کو خریدنے کا سامان کر رہے ہیں....یہ وہی لوگ ہیں جن کے بارے میں قرآن کہتا ہے... "افمن زين لہ سوء عمله فراه حسنا,فإن الله يضل من يشاء ويھدي من يشاء " "بھلا وہ شخص کہ مزین کردئیے گئے ہوں اسکے برے اعمال,پس وہ انکو اچھا دیکھتا (سمجھتا)ہو.,پس بے شک اللہ گمراہ کرتا ہے جسکو چاہتا ہے اور ہدایت دیتا ہے جسکو چاہتا ہے (سورہ فاطر...آیت:8) یعنی انکے برے اعمال انکی نظروں میں بہترین بنادئیے گئے ہیں...یہ سمجھتے ہیں کہ چوری کی بجلی پر لائٹنگ کرکے,,عشق مصطفی میں لاؤڈ اسپیکر پر بلند آواز میں نعتیں چلا کر,,حلوے ,بریانی کھاکر,,حضور صلی الله علیہ وسلم کی آمد کا جشن نہ منانے والوں کو"وھابی,کافر,نبی کا دشمن"قرار دیکر دل کی بھڑاس نکالنے کا نام"عشق مصطفی" ہے... ارے ظالمو!!!! یہ نبی کا عشق نہیں ہے...اگر یہ ہی سب "عاشق مصطفی "کے ٹائٹل کے لیے ضروری ہوتا تو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے صحابی جو حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے سچے عاشق تھے...جنہوں نے حضور( صلعم )کے صرف اعمال وأقوال کو ہی نہیں, پیارے نبی کی ایک ایک ادا کو محفوظ رکھا ,اسکو اپنے بعد والوں کو تعلیم کیا...وہ صحابہ سب سے پہلے یہ کام کرتے... تم اپنے ان اعمال سے نہ صرف نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی تعلیمات کی خلاف ورزی کر رہے ہیں.

بلکہ اللہ رب العالمين کے فرمان: "الیوم اکملت لکم دینکم و أتممت علیکم نعمتی ورضیت لکم الاسلام دینا" آج کے دن میں نے مکمل کردیا تمہارے لیے تمہارا دین,,اور تم پر اپنی نعمت پوری کردی,,اور میں نے تمہارے لیے اسلام کو بطور دین کے پسند فرمالیا"(سورہ آل عمران ) کی صریح خلاف ورزی کے بھی مرتکب ہورہے ہیں. کیونکہ ساڑھے چودہ سو سال پہلے جب "عشق رسول "کے نام پر کی جانے والی یہ بدعات اور خرافات لوگوں کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھی تب میرے اللہ نے دین اسلام کی تکمیل کا اعلان فرمادیا تھا یعنی دین میں اب مزید کسی اضافے یا کمی کی گنجائش نہیں بلکہ دین ہر لحاظ سے مکمل ہو گیا ہے...تو اب آپکی یہ حرکتیں سوائے خرافات اور بدعات کے اور کچھ معنی نہیں رکھتیں...

یاد رکھئے: حجہ الوداع کے موقع پر حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا تھا... "میں تم میں دو چیزیں چھوڑے جا رہا ہوں.. 1: کتاب اللہ 2: سنت رسول اللہ" انکو مضبوطی سے تھامے رکھوگے تو گمراہ نہیں ہوگے... یعنی قرآن اور سنت پر مضبوطی سے قائم رہنے کو,,انکی تمام تعلیمات اور احکامات پر سختی سے عمل پیرا ہونے والے کو گمراہی سے دور رہنے کی بشارت ہے... اب آپ مجھے کوئی ایک آیت یا کوئی ایک صحیح حدیث سنادیجئے جسکو شیخین نے روایت کیا ہو.اور جس میں میلادالنبی منانے کا حکم/اجازت یا کم از کم اباحت کا ہی ذکر ہو...

خدا کی قسم !!! میں بھی جشن ولادت رسول منانے لگ جاؤنگی.. اور اگر آپ ایسی حدیث یا آیت نہیں لاسکتے تو خدارا اپنے اعمال سے باز آجائیے...عشق رسول کے نام پر شیطان کی دکان بند کر دیں اور اللہ کے حضور اپنے ہر قول و عمل سے سچی توبہ کرکے صحابہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے سچے"عاشق رسول"ہونے کا ثبوت دیجئے... اللہ رب العزت ہمیں صحیح معنوں میں عاشق رسول صلی اللہ علیہ و سلم بننے کی توفیق عطا فرمادے...آمین وما علینا الا البلاغ المبین..