پنجاب میں طوفانی بارشوں کے باعث مختلف حادثات میں 15 افراد جاں بحق

لاہور: پنجاب میں گزشتہ روز ہونے والی طوفانی بارشوں نے تباہی مچادی مختلف حادثات و واقعات میں 15 افراد جاں بحق اور 50 زخمی ہوگئے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق لاہور سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں جاری موسلادھار بارشوں نے تباہی مچادی ہے گزشتہ روز ہونے والی طوفانی بارشوں کے باعث پورا لاہور ڈوب گیا ہے جس نے حکومت پنجاب کی کارکردگی اور ترقیاتی کاموں کا پول کھول کر رکھ دیا ہے۔

لاہور میں آج بھی وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری ہے جب کہ بوندا باندی کا سلسلہ صبح سے شروع ہوچکا ہے، بارش کے باعث شہر کی کئی اہم شاہراہیں اور گلیاں ندی نالوں کامنظر پیش کررہی ہیں، جب کہ انتظامیہ پانی نکالنے کی کوششوں میں مصروف ہے۔

صوبائی دارالحکومت میں وقفے وقفے سے برسنے والی بارش نے معمولات زندگی درہم برہم کر دیئے ہیں، نکاسی آب کے مناسب انتظامات نہ ہونے پر شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے، نشیبی علاقوں میں پانی گھروں میں داخل ہوگیاہے، تالاب بنی گلیاں اور سڑکیں انتظامی اداروں کی ناقص کارکردگی کو ظاہر کر رہی ہیں۔

بارش کے باعث لیسکو کے 300 سے زائد فیڈرز ٹرپ کرنے کے باعث بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی ہے جس نے شہریوں کے مسائل مزید بڑھادئیے ہیں۔ دوسری جانب صبح سے جاری تیز بارش لوگوں کے لیے رحمت کے بجائے زحمت بن گئی ہے، بارش کا پانی گھروں میں داخل ہونے سے لوگوں کا لاکھوں کا نقصان ہو گیا جب کہ گھروں میں بھی تین تین فٹ پانی جمع ہوگیا۔

مسلسل ہونے والی بارش کے باعث چھتیں گرنےاورکرنٹ لگنے سمیت مختلف حادثات و واقعات میں سے15افرادجاں بحق اور 50سےزائدزخمی ہوگئے ہیں۔ جوہر ٹاؤن میں بارش کے باعث چھت گرنے سے باپ بیٹا جا ں بحق اور 3 سالہ لڑکی زخمی ہوگئی جسے طبی امداد کے لیے جنا ح ہسپتال منتقل کر دیا گیاہے۔

لاہورمیں گزشتہ روز ہونےوالی بارش کے باعث جی پی اوچوک کےسامنےپڑنے والا 20فٹ گہرا،40فٹ چوڑاشگاف بھرلیاگیا، گڑھابھرنے کے لیے فوج کومدد کےلیے بلانا پڑا۔ مقامی افراد کا ماننا ہے کہ کافی عرصے بعد لاہور شہر میں اس قدرطوفانی بارش ہوئی ہے، ضلعی انتظامیہ او واسا اہلکاروں نے علاقے سے نکاسی آب کا کام شروع کردیا ہے۔