حوصلہ کیوں ٹوٹ جاتے ہیں؟ - شکیل احمد ملک

سب سے پہلے آپ یہ جان لیں کہ حوصلے ٹوٹتے نہیں توڑے جاتے ہیں اور توڑنے والے کوئی اور نہیں ہم اور آپ ہی ہوتے ہیں۔ طالب علمی کے زمانے میں مدارس اور جامعات میں طلبہ ایک دوسرے کی دل شکنی کرتے ہیں۔ فراغت کے بعد مدارس وجامعات میں میدان تدریس میں قدم رکھنے کے بعد اساتذہ آپس میں ہی ایک دوسرے کو پھوٹی آنکھ نہیں بھاتے۔ کسی اور میدان میں اس میدان کے کھلاڑی اس کی ٹانگیں کھینچنے کے لیے کمر بستہ رہتے ہیں۔ بہر حال، ہر میدان میں کوئی بھی کسی کو اپنے سے آگے دیکھنا نہیں چاہتا۔ کسی کی ترقی وہ اپنے گلے کا کانٹا سمجھ کر اسے نکال پھینک دینا چاہتا ہے۔ اسے وہ پستی کا راستہ دکھانے کے لیے مختلف حربے اور طریقے استعمال کرتا ہے، بسا اوقات وہ اس میں کامیاب بھی ہوجاتا ہے۔ اس طرح سے ہمارے حوصلے پست ہوجاتے ہیں کچھ کر گزرنے کا جو ہنر ہمارے اندر پنہاں ہوتا ہے، وہ سرد پڑجاتا ہے اور پھر ہم تنزل میں ترقی کررہے ہوتے ہیں.

لیکن ہمیں عزم کرنے کی ضرورت ہے ہمت سے کام لینے کی ضرورت ہے، اللہ پر یقین کامل رکھنے کی ضرورت ہے۔ دنیا کے سارے لوگ ہمارے مخالف ہوجائیں ہمیں اپنے خواب کو شرمندۂ تعبیر کرنا ہے۔ اگر ہم حق پر ہیں اور ہمارا یقین کامل اللہ کی ذات پر ہے تو پھر ہمیں ڈرنے اور گھبرانے کی ضرورت نہیں "لا تحزن إن اللہ معنا" اللہ ہمارے ساتھ ہے ہم ہوں گے کامیاب ایک دن!

یہ بات ذہن میں رکھیں نبی صلی اللہ علیہ وسلم کا جو مشن تھا سارے مکہ کے کافر اس مشن کے مخالف تھے نبی اکرم صلی اللہ علیہ و سلم نے اللہ کی ذات پر بھروسہ کرتے ہوئے اس کام کو جاری رکھا دشمن آپ کی جان کے پیچھے پڑ گئے یہاں تک کہ آپ تک رسائی حاصل کرلی۔ ابو بکر رضی اللہ عنہ گھبرائے نبی نے تسلی دی غم نہ کرو اللہ ہمارے ساتھ ہے۔

دوستو! یہ بات یاد رکھیں آپ کسی بھی میدان میں قسمت آزمائی کریں گے، مخالفین آپ کے سامنے آئیں گے۔ حوصلہ افزائی کرنے نہیں آپ کی تعریف اور آپ کے کام کی ستائش کے لیے نہیں بلکہ تنقید کرنے اور حوصلہ شکنی کے لیے۔ لیکن آپ کو حوصلہ رکھنا ہے اپنے مشن اور کام کو جاری رکھنا ہے اگر ہمارا مشن، ہمارا کام شرعی نقطہ نظر سے اچھا ہے حلال ہے اور اس سے رضائے الہی بھی مقصود ہے تو وقتی طور پر تو کوئی ہمارا نقصان کر سکتا ہے لیکن جیت ہماری ہی ہوگی کامیابی ہماری قدم بوسی کرے گی۔ آخر میں یہ بات یاد رکھیں

مسلسل کوششوں سے ہی تو تقدیریں بدلتی ہیں

جو تھک کر بیٹھ جاتے ہیں وہ منزل پا نہیں سکتے

ٹیگز