اُردو لغت تاریخی اُصول پر، اردو لغت آن لائن - انعام حسن مقدم

کسی بھی زبان کو صحیح تلفظ کے ساتھ بولنے و پڑھنے اور درست تفہیم کے ساتھ سمجھنے و لکھنے کے مسئلوں کا آسان حل یہ ہے کہ اُس زبان کی کسی مُستند لغت سے راہنمائی و مدد حاصل کی جائے۔ اردو زبان سے لگاؤ پسندیدگی محبت و شفقت رکھنے، اِسے سیکھنے اور استعمال کرنے والوں کے لیے بہت بڑی خوش خبری اور بہت ہی کام کی "کڑی یا جوڑ" (link) پیشِ خدمت ہے۔

بابائے اردو مولوی عبدالحق مرحوم نے اُردو کی ایک جامع و مبسوط لغت کے ابتدائی خدوخال وضع کیے اور "اُردو لغت (تاریخی اُصول پر)" کے منصوبے کو عملی جامہ پہنانے کے لیے "اُردو لغت بورڈ" کی بنیاد رکھی۔ ﺍِس ادارے کی مرتب کردہ اردو لغت بائیس (22) جلدوں میں، بائیس ہزار (22,000) صفحات پر مشتمل، دو لاکھ چونسٹھ ہزار (264,000) الفاظ کا ذخیرہ ہے جسے اردو زبان کے جَیّد اساتذۂِ کرام نے 52 سالوں کی محنت سے بلاشبہ ہزاروں صفحات سے عرق کشید کر مرتب کیا اور یہ لغت بالآخر سن 2010ء میں مکمل ہوئی۔ اب مفت آن لائن بھی دستیاب ہے۔ یہ لغت مجلدات کی طبعی صورت میں قیمتاً بھی دستیاب ہے۔

تاریخی اُصول اور بیتی صدیوں سے لی ہوئی اسناد کے باعث یہ لغت برصغیر کے ایک ہزار سالہ تہذیبی اور تمدنی ارتقاء کی بیش بہا دستاویز ہے جس میں اس تہذیب کے ایک ایک لفظ کو محفوظ کرلیا گیا ہے۔

ہر ہر لفظ کے معنٰی یا اگر ایک سے زائد معانٰی ہوں تو ان کی پوری تفصیل درج ہے۔ درست مخارج اور تلفظ کی راہنمائی کے لیے اعراب کی موجودگی یقینی بنائی گئی ہے۔ ہر ہر لفظ کی سند یا اسناد و اشتقاق کے حوالوں کی موجودگی یقینی طور پر اس لغت کو ایک بین الاقوامی معیار کی حامل لغت بنا دیتی ہے۔ ہر ہر مقام و مرحلہ پر لغت کو بین الاقوامی معیار پر برقرار رکھنے کے لیے "آکسفرڈ ڈکشنری" کے معیار کو سامنے رکھا گیا ہے اور کماحَقَّہُ اس معیار کا بطریقِ احسن حق بھی ادا کیا گیا ہے۔ آکسفرڈ ڈکشنری کی طرز پر اِس ڈکشنری میں بھی قدیم و جدید، متروک و رائج سب ہی قسم کے الفاظ درج کیے گئے ہیں۔ کسی بھی لفظ کو لکھیں اور اس کے معنٰی یا معانٰی کی پوری فہرست کُھل جائے گی اور پھر آپ جس معنٰی پر کِلک (click) کریں گے تو اس لفظ کی مکمل علمی تحقیق آپ کے سامنے ہوگی۔ اگر ایک لفظ "اعراب" کی وجہ سے معنٰی بدل لیتا ہے تو اعراب لگانے کی ضرورت نہیں آپ صرف بغیر اعراب کے ساتھ وہ لفظ لکھ دیں اور پھر آن لائن لغت کا جادو دیکھیں مثلاً اگر آپ لفظ "گھٹنا" لکھیں گے تو لغت آپ کو "گَھٹنا" یعنی کم ہونا، "گُھٹنا" یعنی ران اور پنڈلی کا درمیانی جوڑ، "گُھٹَنَّا" یعنی گھوڑے کی زین سازی اور دیگر چار یعنی کل تقریباً 7 معانٰی پیش کر دے گا۔ اس وقت یہ لغت ویب سائٹ، ایپ اسٹور اور پلے سٹور پر بھی دستیاب ہے۔ اِتنا تحقیقی، منفرد و جامع نوعیت کا کام اب تک صرف انگلستان اور جرمنی میں ہوا ہے۔ پاکستان سے بہت زیادہ وسائل رکھنے والے ممالک نے بھی اس راہ میں قدم آگے نہیں بڑھایا ہے۔ چنانچہ اس لغت کی تکمیل پاکستان کے لیے ایک امتیازی وصف کی حامل ہے۔

اُردو لغت بورڈ یا (UDB) وفاقی وزارتِ تعلیم، حکومتِ پاکستان کی ایک قرارداد کے مطابق سن 1958ء میں قائم ہوا اور 2007ء تک یہ ایک خودمختار ادارے کی حیثیت سے کام کرتا رہا اور 2007ء میں ہی عدالتِ عظمیٰ کے حکم سے "وفاقی وزارتِ تعلیم" کا ماتحت ادارہ قرار پایا۔ اٹھارہویں ترمیم کے بعد، چند ماہ "کابینہ ڈویژن" پھر "وفاقی وزارتِ قومی ورثہ و یکجہتی" میں شامل کر دیا گیا۔ وزارتوں کے انضمام کے بعد "وفاقی وزارتِ اطلاعات ونشریات و قومی ورثہ" کا ماتحت ادارہ قرار پایا اور اب "قومی تاریخ و ادبی ورثہ ڈویژن" کی زیرنگرانی خدمات سر انجام دے رہا ہے۔

اِس لغت کی ترتیب، تدوین، تحقیق، تحریر، طباعت، جلد سازی، سافٹ کاپی کی تشکیل و آن لائن موجودگی تک اور منجملہ دیگر منسلک و متعلق امور کے نمٹانے میں سن 1958ء سے آج تک جتنے بھی حاضر سروس اور رضاکارانہ اہلِ علم اور تکنیکی افراد اس عظیم علمی کاوش کا حصہ بنے بلاشبہ اُن کی تعداد کئی درجن یا سینکڑوں میں ہوگی الله تعالٰی سب کو جزائے خیر عطا فرمائے۔ اِلٰہی آمین ثمَّ آمین یا رَبّ العٰلمین بجاہِ سیدالانبیاءِ والمرسلین۔ صَلَّی اللهُ تعالٰی علیہِ وَ آلِهِ وَ بارِک وَسلم۔

اتنے علمی، تحقیقی، گرانقدر، قابلِ تعریف و توصیف اور لائقِ ستائش کارنامے کے باوجود علمی و ادبی عاجزی کا ثبوت یہ ہے کہ جس لفظ کے بھی معانٰی و تحقیق سے آپ کی نظر گزرے گی آخر میں ایک کھڑکی (pop-up) کسی با ادب خدمت گار کی طرح سامنے آئے گی اور الوداعی سلام کے طور پر عرض کرے گی، "زیرِ نظر ویب سائٹ انسانی کاوش ہے لہٰذا اغلاط کے امکانات سے مبرا نہيں، آپ سے التماس ہے کہ اغلاط کی نشان دہی میں ہماری معاونت فرمائیں۔ نشان دہی کے لیے ہماری ویب سائٹ پر رابطہ کے ان باکس میں اپنی رائے سے آگاہ کریں۔"

Comments

انعام حسن مقدم

انعام حسن مقدم

کراچی سے تعلق رکھنے والے انعام حسن مقدم مختلف مذاہب، اقوام اور سماجی طبقات کے باہمی تعلقات، رواداری اور عزت نفس کے احترام کا قائل ہیں۔ عرصہ 25 سال سے مختلف مقامی و کثیر القومی انشورنس کمپنیز اور بینکس سیلز، مینجمنٹ، آپریشنز، مارکیٹنگ اور دیگر خدمات انجام دے رہے ہیں۔

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
/* ]]> */