چلڈرن سائیکالوجی - حافظ محمد زبیر

بہت ضروری ہو گیا ہے کہ مستقبل کی ماؤں کو "چلڈرن سائیکالوجی" کا سبجیکٹ پڑھایا جائے تا کہ وہ بچوں کی تربیت اور شخصیت کی تعمیر [personality development] میں کوئی اہم کردار ادا کر سکیں۔ ایک یونیورسٹی گریجویٹ کا مقدر ماں بننا ہے لیکن اس جدید نظام تعلیم کی برکت سے مستقبل کی وہ ماں جس چیز سے سب سے زیادہ محروم ہے، وہ ماں بننے کی صلاحیت ہے۔ اس پورے نظام تعلیم میں بچیوں کو اگر کسی چیز کی تعلیم نہیں دی جاتی تو ماں بننے کے لیے بنیادی تعلیم اور تربیت ہے۔

اس دو منٹ کی وِیڈیو کو دیکھیں گے تو پھر ان الفاظ کی اہمیت ثابت ہوگی۔ یونیورسٹی لیول پر بچیوں کو جن مضامین میں سے لازمی طور گزارنا چاہیے تو ان میں عورتوں کی سائیکالوجی، عورتوں کی صحت کے مسائل، چلڈرن سائیکالوجی، چلڈرن ایجوکیشن، فرسٹ ایڈ اور گھریلو ٹوٹکے، ہوم مینیجمنٹ، ہوم اکنامکس اور امور خانہ داری وغیرہ شامل ہیں۔ مطالعہ پاکستان لازمی یا انگریزی لازمی پڑھ کر ان کو کتنے نفلوں کا ثواب ملے گا؟

ہمارے تعلیمی مقاصد نہ ہونے کے برابر ہیں۔ جس تعلیم پر لاکھوں روپے خرچ کر دیے جاتے ہیں، راتیں جاگ کر گزاری جاتی ہیں، اس کا ہماری عملی اور حقیقی زندگی سے دور پرے کا بھی کوئی تعلق نہیں ہے۔ اس لیے بہت ضروری ہے کہ میٹرک سے لے کر گریجویشن لیول تک کے تمام لازمی مضامین اور نصاب تعلیم کو ریوائز کیا جائے۔ کمپیوٹر سائنس میں سافٹ ویئر انجینیئرنگ یا انگریزی میں ماسٹرز کر لینے سے یہ تو سمجھ نہیں آئے گی کہ بچوں کی تربیت کیسے کرنی ہے؟

چلیں، پیمپر باندھنا تو پھر وقت کے ساتھ آ جائے گا کہ دو چار مرتبہ بچے کا پیشاب لیک ہوگا، بستر گندا ہوگا، تو سمجھ آ ہی جائے گی کہ کیسے باندھنا ہے۔ لیکن پریگنینسی سے لے کر ڈیلیوری تک کے مسائل اور پھر بچوں کی نگہداشت سے لے کر ان کی تعلیم وتربیت تک کے کتنے مراحل ایسے ہیں جو آج ہماری بچیوں کے لیے تیار کیے گئے تعلیمی نصاب یا نظام تعلیم کا حصہ ہیں حالانکہ اس بیچاری نے ملازمت کرنی ہو یا نہ کرنی ہو لیکن یہ کام اسے ضرور کرنے ہیں۔

بھئی، بہت ضروری ہو گیا ہے کہ تعلیم کے نام پر اس بھیڑ چال سے نکلا جائے اور ایسی تعلیم کو حاصل کرنے کی طرف توجہ دی جائے کہ جس کا ہماری عملی زندگی سے کوئی تعلق ہو۔ ایک منٹ کی ویڈیو ہے، یہ ضرور دیکھ لیجیے گا کہ اگر اس مسئلے کی طرف توجہ نہیں دیں گے تو اپنی آئندہ آنے والی نسلوں کو تباہ کر دیں گے۔ ایبنارمل بچوں کی تعداد معاشرے میں بہت بڑھ جائے گی۔ ماں، بچے کی پہلی استاذ ہے اور اس استاذ کو آپ نے ٹریننگ ویڈیو بنانے کی تو دے دی ہے لیکن بچہ سنبھالنے کی نہیں دی۔