ہدایت نامہ برائے دانشور حضرات - سعید شیخ

دانشور کا تعلق خواہ کسی بھی جماعت گروہ یا فرقے سے ہو، ہوتا وہ دانشور ہی ہے، خود کو عام پبلک سے قدرے بہتر سمجھنا ہی ایک دانشور کا طرہ امتیاز ہوا کرتا ہے، پرانے اور نئے آنے والے دانشوروں کے لیے ایک ہدایت نامہ جاری کرنے کا اہتمام کیا گیا ہے جس کے چیدہ چیدہ نکات درج ذیل ہیں.

1. کسی بھی موضوع پر ٹویٹ یا فیس بکی سٹیٹس اپ ڈیٹ کرنے کے بعد ریپلائی کرنے والے مرد و خواتین کو جواب دینے سے حتی الوسع گریز کریں.

2. حکومت کے ساتھ ساتھ اپوزیشن کو بھی ہلکی آنچ پر رگڑا لگاتے رہیں، اس طرح عام عوام پر آپ کے غیر جانبدار اور مہان شخصیت ہونے کا تاثر قائم رہے گا. کسی بھی متوقع واقعہ، عدالتی فیصلہ، یا کرکٹ میچ کے حق میں اور مخالفت میں دونوں طرح کی ٹویٹ اور سٹیٹس اپ ڈیٹ کر دیں اور بوقت ضرورت ایک ٹویٹ یا سٹیٹس لوگوں کو دکھا کر اپنی مستقبل بینی اور معاملہ فہمی کی دھاک بٹھا دیں.

3. اپنی سالگرہ ہونے کی صورت میں تمام لوگوں کی وشز کا باری باری جواب دینے سے ہمیشہ گریز کریں، بلکہ وقوعہ کے تقریبا چوبیس گھنٹے بعد ایک ٹویٹ میں ہی مصروفیت کا بہانہ بنا کر سب کا شکریہ ادا کر دیں.

4. ایک ہزار سے کم فالورز رکھنے والے مرد حضرات کو منہ لگانے سے ہمیشہ گریز کریں، جبکہ دو سو فالورز رکھنے والی خاتون کی گوبھی گوشت کھانے والی ٹویٹ پر نہ صرف ایموجی بنائیں بلکہ اس کو لائک بھی کریں، ہو سکے تو ایک آدھا کمنٹ بھی کردیں.

.5 سیلیبریٹیز کو ہمیشہ ہدف تنقید بنائیں اور ان کی ہر نئے آنے والی فلم یا ڈرامے کا پرانی فلم یا ڈرامے کے ساتھ موازنہ کرتے رہیں.

.6 ہمیشہ غیر معروف شعرا کے شعر ہی ٹویٹیں، اس سے عام عوام کو آپ کے ادب دوست اور علم دوست ہونے کا تاثر ملتا رہے گا.

6. انٹریکشن ہمیشہ اپنے ہم عصر دانشوروں سے ہی کریں اور ان کی کسی بھی عامیانہ جگت پر واشگاف الفاظ میں قہقہ لگانا نہ بھولیں.

7. دو یا تین بعد کافی یا بلیک کافی کی ضرورت افادیت پر ایک آدھ ٹویٹ ضرور کریں، ہو سکے تو کسی بھی گورے کا فرضی نام لکھ کر اس کے ساتھ کافی پینے کا ذکر ضرور کریں.

8. بیرون ملک مقیم ہونے کی صورت میں دیسی ٹویپس کو موروثی سیاست کے نقصانات سے گاہے بگاہے آگاہ کرتے رہیں.

9. نیلا ٹک حاصل ہو جانے کی صورت میں اپنی کی گئی ٹویٹ یا اپ ڈیٹ کیے گئے سٹیٹس کو ہمیشہ حرف آخر ہی تصور کریں، پھر بھی کوئی آپ کو قائل کرنے کی گستاخی کر بیٹھے تو اسے بلاک کرنے میں ہرگز دیر مت لگائیں.

10، کسی بھی خاتون کی طرف سے کی گئی ٹویٹ مثلا سر درد، بخار، نزلہ و زکام پر ایلو پیتھک، یا ہومیو پیتھک دوائی تجویز کرنا ہرگز نہ بھولیں، جبکہ اس قسم کی مردانہ ٹویٹ کی صورت میں مذکورہ ٹویپ کو ایسی ٹویٹ کرنے پر سخت تنبیہ کریں.