ریمنڈڈیوس کی کتاب - عادل فیاض

معروف امریکی جاسوس ریمنڈڈیوس کی کتاب نے آتے ساتھ ہی پاکستان میں دھوم مچا دی ہے. ایسی دھوم تو عامر خان کی "دھوم" نے بھی نہیں مچائی تھی.

حیرت ہے اس کتاب کے آنے بعد پاکستانی عوام حیرت میں پڑ گئی ہے کہ سیاست دانوں میں تو "سبز خون" کب کا ختم ہوگیا ہے لیکن یہ ہمارے حساس اداروں نے کیا کر دیا ہے؟
(خاکسار کی رائے میں جنرل شجاع پاشا صاحب کو یہ کردار بالکل بھی ادا نہیں کرنا چاہیے تھا جو انہوں نے ادا کیا. یہ کردار ادا کر کے انہوں نے قوم سے یہ تاثر ختم کر دیا ہے کہ ملک کے حساس ادارے بھی مخلص نہیں رہتے، وہ بھی انسان ہیں. لیکن میرے خیال سے یہ تاثر ختم ہونا درست نہیں ہے) حالانکہ "خواص" تو ریمنڈ ڈیوس کے فوری جانے کے بعد ہی کہہ رہے تھے کہ سویلین میں اتنا دم خم نہیں ہے کہ وہ ریمنڈ ڈیوس جیسے معزز امریکی شہری کو انصاف دلوائیں. ضرور پاکستان کے اصل حکمرانوں نے یہ کارخیر سر انجام دیا ہوگا.

چونکہ خواص کا مسئلہ یہ ہے کہ وہ تاریخ یاد رکھتے ہیں اور اس سے سبق سیکھتے ہیں. (ان کو مشرف صاحب یاد تھے) لیکن عوام کا مسلہ یہ ہے وہ "شارٹ میموری " جیسی بیماری میں مبتلا ہے. شاید عامر خان نے پاکستانی عوام کے اسی مسئلے کو دیکھتے ہوئے "گجنی" فلم بنائی تھی.

اس کتاب کے آنے کے بعد ہمیشہ کی طرح قوم تقسیم ہی نظر آئی. کچھ لوگ طبلہ بجا رہے ہیں کہ ہم نہ کہتے تھے کہ "اس حمام میں سیاست دان ہوں یا عسکری شعبے کے ذمہ داران سب ننگے ہیں. لگ گیا پتا؟" اور کچھ خوب ڈھول پیٹ رہے ہیں کہ "دیکھیں جی! اگر زرادی، شہباز اور پاشا کی جگہ عمران اور سراج الحق بھی ہوتے تو یہی فیصلہ کرتے." مؤخر الذکر اپنے مؤقف پر زور دینے کے لیے ایک دلیل دیتے ہیں. میں اول الذکر گروہ سے وابستہ ہونے کے باوجود ان کی دلیل سے کسی حد تک متفق ہوں. وہ کہتے ہیں کیونکہ ہم ایک غریب ملک ہیں اور ہم نے امریکہ سے بھیگ بھی مانگنی ہوتی ہے. دوسرا ہماری اتنی اوقات نہیں کہ امریکہ جیسی سپر پاور سے مقابلہ کرتے لہذا ملک کے وسیع تر مفاد میں یہ کام کیا گیا ہے.

یہ بھی پڑھیں:   جہان دانش - بلال شیخ

جیسے پہلے عرض کیا کہ مجھے اس مفروضہ سے اتفاق ہے لیکن میرا سوال دوسرا ہے کہ حضور اس ملک کی معاشی، سیاسی اور سماجی حالات اگر آج ٹھیک نہیں ہے تو اس کا ذمہ دار کون ہے؟ قرض آپ لیتے ہیں لیکن کرپشن کی مد میں آپ ہی خرچ کرتے ہیں. غریب عوام کی قسمت میں ٹینکر سے گرا ہوا تیل ہی ہے بلکہ وہ بھی نہیں ہے.

چین ہمارے بعد آزاد ہوا آج دنیا کی سپر پاور ہے. جاپان اور ترکی کا دوسرا جنم ہمارے بعد ہوا اور آج معاشی طور پر مضبوط ممالک میں شامل ہیں. کیوں؟ کیونکہ وہاں کی لیڈرشپ آپ کی طرح کرپٹ نہیں. وہاں کی لیڈر شب میڈیا اور عدالتوں کو خرید کر عوام کو بیوقوف نہیں بناتی.

عرض اتنی ہے ملک کے وسیع تر مفاد میں ضرور فیصلہ کریں. ضرور عوام کو اندھا کو استعمال کریں لیکن خدارا اس ملک کو معاشی اور سیاسی طور پر مضبوط بھی کریں کیونکہ آج اگر عالمی دنیا میں یہ غلاموں سی زندگی گزار رہا ہے تو اس کے ذمہ دار آپ ہیں، بےچاری "شارٹ میموری" والی عوام نہیں ہے.

اگر ہر بار کی طرح آپ کی غلطیوں کی وجہ سے عوام ہی کو زبردستی "دیت" لینی پڑی تو ایک دن عوام کو خواص والا شعور حاصل ہوجائے گا اور جو سوشل میڈیا کی وجہ سے ہو رہا ہے. یقیناً آپ اور اس ملک کے وسیع تر مفاد میں اچھا نہیں ہوگا.

Comments

عادل فیاض

عادل فیاض

عادل فیاض اسلامک یونیورسٹی اسلام آباد سے میڈیا سیکھنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ سیاست، مذہب، کرکٹ، بحث و مباحثہ سے شغف رکھتے ہیں. مستقبل میں میڈیا کو اسلامائز کرنے کا منصوبہ رکھتے ہیں۔

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.