قرآن پاک اور اللہ تعالیٰ کے نام - نورین تبسم

اللہ تعالٰٰی کے ننانوے (99) نام ہیں۔ یہ سب نام قرآن پاک میں وقتاً فوقتاً نازل ہوئے، تفصیل اس طرح سے ہے۔

سورۂ فاتحہ (1) : اس میں 5 نام ہیں. اللہ، الربُ، الرحمٰنُ ، الرحیم، المالک

سورہ بقرہ (2) : اس میں 26 نام ہیں، المحیطُ، القدیرُ، العلیمُ، الحلیمََُ، التوابُ، البصیرُ، الواسعُ، البدیعُ، الرؤفُ، الشاکرُ، اللہ، الواحدُ، الغفورُ، الحکیمُ، القابضُ، الحمیدُ، الباسطُ، الحیُ، القیومُ، العلیُ، العظیمُ، الولیُ، الغنیُ

سورہ آل ِعمرآن (3) : اس میں 4 نام ہیں، القائمُ، الوہابُ، السریعُ، الخبیرُ

سورہ نساء (4) : اس میں 6 نام ہیں، الرقیبُ، الحسیبُ، الشہیدُ، الغفورُ، المقیتُ، الوکیلُ

سورہ انعام (6) : اس میں 5 نام ہیں، الفاطرُ، القاہرُ، القادرُ، اللطیفُ، الخبیرُ

سورہ اعراف (7) : اس میں 2 نام ہیں، المحیُ، الممیتُ

سورہ انفال (8): اس میں 2 نام ہیں، المولی، النصیر

سورہ ہود (11) : اس میں 7 نام ہیں، الحفیظُ، الرقیبُ، المجیدُ، البرق، المجیبُ، الودودُ، الفعالُ

سورہ رعد (13) : اس میں 2 نام ہیں، الکبیرُ، المتعالُ

سورہ ابراہیم (14) : اس میں 1 نام ہے، المنانُ

سورہ حجر (15) : اس میں 1 نام ہے، الخلاقُ

سورہ نحل (16) : اس میں 1 نام ہے، الباعثُ

سورہ مریم (19) : اس میں 2 نام ہیں، الصادقُ، الوارثُ

سورہ مؤمنون (23) : اس میں 1 نام ہے، الکریمُ

سورہ نور (24) : اس میں 3 نام ہیں، الحقُ، المتینُ، الوارثُ

سورہ فرقان (25) : اس میں 1 نام ہے، الھادیُ

سورہ سبا (34) : اس میں 1 نام ہے. الفتاحُ

سورہ مؤمن (40) : اس میں 3 نام ہیں، الغافرُ، القابلُ، الشدیدُ

سورہ ذاریات (51) : اس میں 3 نام ہیں، الرزاقُ، ذوالقوہ، المتینُ

سورہ طور (52) : اس میں 1 نام ہے، الحنانُ

سورہ قمر (54) : اس مین 1 نام ہے، المقتدرُ

سورہ رحمان (55) : اس میں تین نام ہیں، الباقیُ، ذوالجلال، ذوالاکرام

سورہ حدید (57) : اس میں 4 نام ہیں، الاولُ، الآخرُ، الظاہرُ، الباطنُ

سورہ حشر (59) : اس میں 10 نام ہیں، الخالقُ، القدوسُ، السلامُ، المومنُ، المھیمنُ، العزیزُ، الجبارُ، المتکبرُ، الخالق، الباریُ، المصورُ

سورہ بروج (85) : اس میں 2 نام ہیں، المبدیُ، المعیدُ

سورہ اخلاص (112) : اس میں دو نام ہیں، الاحدُ، الصمدُ

بقول حضرت سُفیان بن عینیہ کہ عبداللہ بن احمد نے ان سے زائد نام بھی بتائے ہیں، وہ یہ ہیں: الفاضلُ، الجوادُ، الماجدُ، احکم الحاکمین۔

Comments

نورین تبسم

نورین تبسم

جائے پیدائش راولپنڈی کے بعد زندگی کے پانچ عشرے اسلام آبادکے نام رہے، فیڈرل کالج سے سائنس مضامین میں گریجویشن کی۔ اہلیت اہلیہ اور ماں کے سوا کچھ بھی نہیں۔ لکھنا خودکلامی کی کیفیت ہے جو بلاگ ڈائری، فیس بک صفحے کے بعد اب دلیل کے صفحات کی جانب محوِسفر ہے۔

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.