رمضان کے میزبان: فنکار، کھلاڑی اور گلوکار - عاصم حفیظ

اسلامی جمہوریہ پاکستان میں شعائر اسلام کی کیا حیثیت ہے اس کا اندازہ آپ آجکل مختلف میڈیا گروپس کی جانب سے اپنی رمضان ٹرانس میشن کی تشہیر سے بھی لگا سکتے ہیں ۔ ہر ٹی وی چینل نے ایک دوسرے سے بڑھ کر ’’فنکار ، کھلاڑی اور گلوکار‘‘ اکھٹے کئے ہیں ۔ خوب چرچا کیا جا رہا ہے ، انعامات کا لالچ دیا جا رہا ہے ، گویا پوری قوم کو تیار رہنا ہوگا کہ اس رمضان میں بھی اسلام کی تبلیغ و اشاعت کی ذمہ داری انہی فنکاروں ، کھلاڑیوں اور گلوکاروں کو دی جائے گی ۔ اس میں خوب ہلا گلا ہوگا اور مقدس مہینے میں عوام الناس کو عبادات ،خشیت الٰہی اور روحانیت سے دور کرکے تفریح ، لالچ اور ہلڑبازی کا عادی بنایا جائے گا۔

ابھی چند روز پہلے پیمرا نے ایک ضابطہ اخلاق جاری کیا تھا کہ رمضان ٹرانس میشن کو حدود و قیودمیں رکھا جائے لیکن ایسا لگ رہا ہے کہ چینلز پیمرا کے قوانین ایک بار پھر ہوا میں اڑانے کا ارادہ رکھتے ہیں ۔

پاکستان کی سب سے بڑی رمضان ٹرانس میشن کے دعوے میں ایک چینل پر پانچ لوگ بطور میزبان شریک ہوں گے ، نعمان اعجاز اور بشریٰ انصاری ، کھلاڑیوں میں وسیم اکرم اور شعیب اختر اور "گیت" پیش کریں گے جناب راحت فتح علی خان صاحب! ویسے رمضان میں کیا گیتوں کی اتنی ضرورت ہوتی ہے کہ ایک مہنگے ترین گلوکار کو باقاعدہ مقرر کیا جائے؟ خیر، وہ تو وہی گیت سنائیں گے جو ان کو آتے ہیں جن کی ریٹنگ ہو گی جو سپانسر کہیں گے۔ پھر بشریٰ انصاری کی پہچان مزاحیہ اداکارہ کی ہے اور اب رمضان سے مذاق کا مظاہرہ کریں گی۔ شعیب اختر اور وسیم اکرم بہت اچھے کرکٹر ہوں گے لیکن اسکینڈلز سے وہ بھی پاک نہیں رہے۔ کیا اب انہی سے لوگوں کو اسلام سکھایا جائے گا؟
افسوس تو یہ بھی ہے کہ بہت سے علمائے کرام اور علما کا وقتی لبادہ اوڑھ لینے والے موسمی "دینی سکالرز" بھی ان ساتھ پیش ہوں گے اور اپنے "علم و فضل" کے موتی بکھیریں گے۔ ہلے گلے ، ہلڑ بازی اور ناچ گانے سے کچھ وقت بچا کر ان علمائے کرام سے بھی کچھ باتیں کی جائیں گی۔

کیا یہ المیہ نہیں ہے کہ پاکستانی میڈیا بحریہ ٹاؤن کے خلاف خبر تک چلانے کی جرات نہیں رکھتا لیکن رمضان کا مذاق اڑانے پر کوئی پوچھنے والا نہیں ہے۔ کوئی ہے جو اس بارے آواز بلند کرے کہ پاکستانی قوم کے ساتھ اس رمضان المبارک میں کتنا بڑا مذاق ہونے والا ہے ؟ پوری قوم فنکاروں ، کھلاڑیوں اور گلوکاروں کے ہاتھوں اپنی ’’دینی تربیت‘‘ کے لئے تیار رہے ۔