جوائنٹ فیملی سسٹم، اسلامی نہیں ہندووانہ نظام ہے – حیا حریم

مجبوری صرف سڑک پر بیٹھ کر بھیک مانگنا ہی نہیں ہوتی۔\nمجبوری صرف کسی فٹ پاتھ پر ٹھیلا لگانے کا نام نہیں ہوتا۔\nمجبوری کسی کے دروازے پر جاکر جھاڑو لگانے کا ہی نام نہیں ہوتا۔\nمجبوری کبھی اچھے خاصے انسان کی بھی ہوتی ہے، جب وہ سب سے بڑا بھائی ہو۔\nمجبوری کبھی اس برداشت اور تحمل کا مزید پڑھیں