ماسی کی پریشانی - شبیر بونیری

رات کے تین بج رہے تھے اور میں خلاف توقع جاگ رہا تھا۔ میرے ہاتھ میں نوکیلا پنسل تھا، نیند مجھ سے کوسوں دور تھی اور میں سوچوں کی دنیا کا بے تاج بادشاہ، سوچوں میں ڈوبا ہوا تھا۔ ابھی سونے کا قصد کیا ہی تھا کہ باہر دروازے پر زور سے دستک ہوئی۔ میں رات کے اس وقت اس دستک کو خیالی دنیا کا کوئی اچانک پلاؤ...