سرقہ – نورین تبسم

چہرہ انسان کے جسم کا آئینہ ہوتا ہے اور لفظ اُس کی سوچ کی پرتیں کھولتے ہیں۔ جسمانی طور پر قریب آنے والے ہمارا چہرہ پڑھ کر ہماری شخصیت کا تانا بانا بنتے ہیں۔ ہمارا لہجہ، ہماری آواز دیکھتے ہیں، ہماری طلب جانچتے ہیں، کبھی گزر جاتے ہیں، کبھی ٹھہر جاتے ہیں۔ جبکہ سوچ سفر مزید پڑھیں

یہ وقت کیا ہے؟جاوید اختر

(آئن سٹائن کا نظریہ اضافیت، جاوید اختر کی نظم میں)\nیہ وقت کیا ہے؟\n۔۔۔\nکبھی کبھی میں یہ سوچتا ہوں کہ چلتی گاڑی سے پیڑ دیکھو \nتو ایسا لگتا ہے ، دوسری سمت جا رہے ہیں\nمگر حقیقت میں پیڑ اپنی جگہ کھڑے ہیں\nتو کیا یہ ممکن ہے ؟ ساری صدیاں قطار اندر قطار اپنی جگہ کھڑی ہوں\nیہ مزید پڑھیں

جو پاس ہے اس کی قدر کرو – راحیلہ ساجد

واہ ، کیا لہجہ تھا ، کتنی ملائمت تھی لہجے میں، اور بات کرنے کا انداز کتنا دلکش تھا؟ حامد تو شام سے ہی اسی سحر میں کھویا ہوا تھا۔ اس کی بیوی نے کھانا لا کر سامنے رکھ دیا تو اس نے چپ کر کے کھا لیا، نہ کوئی اعتراض نہ غصہ۔ چائے لا مزید پڑھیں

سماج کے مجموعی تہذیبی علم سے مکالمہ کیجیے – قاسم یعقوب

میں ایک ادبی رسالے کی ادارت سے منسلک ہوں۔ میں جہاں معیاری ادب کی تلاش میں رہتا ہوں وہیں مجھے ادب کے اُن قارئین کی تلاش بھی رہتی ہے جو ادب کے معیاری پن کی کھوج میں رہتے ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ ادب کے نئے لکھاریوں کی حوصلہ افزائی بھی میرے بنیادی وظیفے میں مزید پڑھیں

امیج – حمیرہ خاتون

”ایکسیوزمی، کیا آپ بتا سکتی ہیں کہ ماس ڈیپارٹمنٹ کس طرف ہے؟“ \nشیریں آواز پر اسماء نے سر اٹھا کر دیکھا۔ لانگ پرنٹڈ شرٹ کے ساتھ بلیک ٹرائوزر پہنے وہ سروقد لڑکی اسٹیپ کٹنگ سنہری بالوں کے ساتھ کندھوں پر دوپٹہ پھیلائے سن گلاسز آنکھوں پر لگائے سب سے منفرد نظر آ رہی تھی۔ راستہ مزید پڑھیں

’باتونی لڑکی‘ – محمد جسیم الدین

’باتونی لڑکی‘ رئیس صدیقی کی بچوں کی کہانیوں پر مبنی تصنیف ہے. رئیس صدیقی کا نام کسی تعارف کا محتاج نہیں ہے. چونکہ اکثر وبیشتر ان کی کہانیاں ملک وبیرون ملک کے مقتدر اخبارات ورسائل میں شائع ہوتی رہی ہیں اور یہ سلسلہ آج بھی جاری ہے۔ بچوں کی ضروریات کو ذہن میں رکھ کرتخلیق مزید پڑھیں

معصوم بچہ – محمد ندیم

وہ کوڑے کے ڈھیرسے کاغذ چن رہا تھا\nمیں اس کے دل کی صدائیں سن رہا تھا\n\nریشم میں لپٹااس کا ریشم کی طرح دل\nٹوٹے ہوئے کسی انجم کی طرح دل\n\nکہتا تھا کہ مجھ میں تمنائوںکا طلاطم ہے\nمگران تمنائوں پہ جہاں والوں کا ستم ہے\n\nلوگ نا آشنا ہیں کہ مرے سینے میں بھی دل ہے\nجس میں کھلتے مزید پڑھیں

چوبیس جنوری – سعود عثمانی

چوبیس جنوری کی تاریخ اپنے آغاز سے ہی مجھے ایک سرد، گہری اور تنہاشب میں لے جاتی ہے۔ مسلسل بڑھتا ہوا اور گہرا ہوتا ہوا ایک سایا کہیں سے نمودار ہوتا ہے اور میرے وجود کو ایک لپیٹ میں لے کر ایک گریہ کناں، ٹھنڈی اور نہ ختم ہونے والی رات کے حوالے کردیتا ہے۔ مزید پڑھیں

دیوی – دائود ظفر ندیم

ہم تقریبا پندرہ سال بعد ملے تھے. وہ نوجوانی کے ایام تھے جب ہم دونوں گھنٹوں بیٹھے رہتے تھے. ایک دوسرے سے کبھی نہ ختم ہونے والی باتیں اور پھر خوبصورت اشعار تلاش کرکے ایک دوسرے کو بتلانا، اور ایک ایسی دنیا کے بارے سوچنا جو ہماری سوچوں کے علاوہ کہیں وجود نہ رکھتی. اس مزید پڑھیں

اردو کا چہرہ مسخ نہ کریں – سید مظفر حق

ایک مرتبہ پھر بعض دوستوں نے اردو رسم الخط اور رومن اردو کا مسئلہ چھیڑ دیا ہے بلکہ سچ پوچھیں تو چھیڑخانی کی ہے. اور بڑی عجیب بات ہے کہ اس کی حمایت میں خامہ فرسائی یا لب کشائی کرنے والے اکثر ہمارے ترقی پسند یا رائج الوقت اصطلاح میں لبرل دوست ہیں. بھارت میں مزید پڑھیں