گمراہ – سلسلہ وار کہانی (2) – ریحان اصغر سید

سپیشل پولیس کا نام سنا ہے؟ ہاں جی۔ نوجوان نے بمشکل تھوک نگل کے کہا۔ ہم وہی ہیں۔ نام کیا ہے تمھارا؟ جی میرا نام صفدر ہے جی۔ میں نے کچھ نہیں کیا میں تو ملازم ہوں۔ صفدر بری طرح گھبرا گیا تھا، اس کی عمر بمشکل بیس بائیس سال رہی ہوگی۔ رومی نے اسے مزید پڑھیں

گمراہ – سلسلہ وار کہانی – ریحان اصغر سید

میں اور رومی مری کی طرف محو سفر تھے۔ ہمارے پاس ٹیوٹا کرولا کا دس سالہ پرانا ماڈل تھا لیکن کار ابھی تک اپنی بہترین حالت میں تھی۔ لاہور سے اسلام آباد تک کا سفر ہم نے موٹر وے سے طے کیا تھا۔ اب ہم مری ایکسپرس وے پر تھے۔ جون کا وسط چل رہا مزید پڑھیں

خودکشی – سعادت حسن منٹو

(ساتھیو! خالی الذہنی کا عالم ہے، کچھ نہیں سوجھ رہا، ایسے میں مجھے مطالعے کی طلب ہونے لگتی ہے۔ منٹو کے افسانے پڑھنے شروع کیے تو ایک افسانہ دل کو بہت بھایا، سچ تو یہ ہے کہ ایڈ گر ایلین پو جیسا اسلوب لگا، اور سیدھا دل پر لگا ۔ پیش خدمت ہے – محمد مزید پڑھیں

آنکھیں – قاضی عبدالستار

۔۔۔۔۔۔۔۔۔ طاؤس کی غم ناک موسیقی چند لمحوں بعد رک جاتی ہے۔ ’’سبحان اللہ جہاں پناہ! سبحان اللہ۔‘‘ ’’بیگم!‘‘ (بھاری اور رنجور آواز میں) ’’جہاں پناہ اگر ہندوستان کے شہنشاہ نہ ہوتے تو ایک عظیم مصنف، عظیم شاعر، عظیم مصور اور عظیم موسیقار ہوتے۔‘‘ ’’یہ تعریف ہے یا غم گساری؟ بہرحال جو بھی ہے مابدولت مزید پڑھیں

ادب اور فکشن رائٹر، عام‫ قاری کی نظر سے – عائشہ تنویر

”ادب برائے زندگی“ اور ”ادب برائے ادب“ کی بحث زمانوں سے ادبی حلقوں میں چلی آ رہی ہے، لیکن ان پر بات کرتے ہوئے پاپولر فکشن کو شامل نہیں کیا جاتا‫. ڈائجسٹ رائٹر اور فکشن رائٹر ہمارے ہاں ادیب نہیں مانے جاتے. ان پرکڑی تنقیدگو ہمیشہ ہی ہوتی رہی لیکن اب کچھ عرصے سے مختلف مزید پڑھیں

تِھری ڈِی کُڑیاں اور وزیراعلی – ونود ولاسائی

رافع یار جلدی چلو مُجھےگھر چھوڑ کر آؤ، ضروری کام ہے. دو تین بار بولنے کے باوجود اُس صاحب پر کُچھ فرق نہیں پڑا. انعام بولا سر میں چھوڑ کر آؤں.؟ یار محمد کی پیچھے سے کچھ ضرورت سے زیادہ ہی بھاری آواز میری سندھ کی جوان کو میں ہی چھوڑ کر آؤں گا، لیکن مزید پڑھیں

”ادّھا“ – گلزار کا شاہکار افسانہ

سب اُسے ”ادّھا“ کہہ کے بلاتے تھے۔ پورا کیا، پونا کیا،بس ادّھا۔۔۔ قد کا بونا جو تھا۔ پتا نہیں کس نے نام رکھا تھا۔ ماں باپ ہوتے تو ان سے پوچھتا۔\r\n\r\nجب سے ہوش سنبھالا تھا، یہی نام سنا تھا اور یہ بھی نہیں کہ کبھی کوئی تکلیف ہوئی ہو۔ دل دُ کھا ہو۔ کچھ نہیں۔ مزید پڑھیں

محبّت، ضرورت اور انا پرست – تصوّر حسین خیال

\r\nمحبّت کا موضوع انسانی تاریخ جتنا ہی قدیم ہے۔ انسانیت کا واسطہ تب پڑا جب موضوعات تعریف و تشریح کے محتاج نہیں تھے۔ وجود تھا، وضاحت ضروری نہیں تھی۔ قلم آزمائی بارہا ہوئی۔ اپنے اپنے تجربے تشریحات کی صورت تحریر کیے گئے۔ مگر موضوع سیر نہ ہوسکا۔ صحراؤں جیسی تشنگی ابھی بھی بڑے بڑے لکھاریوں مزید پڑھیں

جنید جمشید کی جدائی پر ایک ہندوستانی شاعر کی اثر انگیز نظم

نسیم مشکبار بھی کیوں آج سوگوار ہے\r\n یہ کون چل بسا یہاں ہر آنکھ اشکبار ہے\r\n نسیم صبح کہہ گئی دلوں پہ برق پڑ گئی\r\n چراغ تھا جو بجھ گیا وہ انجمن اجڑ گئی\r\n وہ مہوشوں کی ٹولیاں وہ بزم جاں بچھڑ گئی\r\nفسردہ نظم ہی نہیں غزل بھی بے قرار ہے\r\n یہ کون چل بسا مزید پڑھیں

ٹارگٹ – حمیرہ خاتون

”مس، کل ہماری گلی میں رات کو ایک بہت بڑا پروگرام ہے جس میں سب نعتیں پڑھیں گے۔“ عمران نے بہت ہی خوشی سے اپنی ٹیچر کو بتایا۔\r\n”اور مس، وہ جو ٹی وی میں آتے ہیں نا، وہ بھی آئیں گے۔“ عابد نے بڑے پرجوش لہجے میں بتایا۔\r\n”اچھا، یہ تو بہت ہی اچھی بات ہے۔“ مزید پڑھیں