گھنگھنیاں …… مبشر علی زیدی

بعض اوقات میں کئی کئی دن سو نہیں پاتا۔
میری نوکری ہی کچھ ایسی ہے۔
چھٹی ملتی ہے تو لمبی تان کے سوتا ہوں۔
دو دو دن سوتا رہتا ہوں۔
میرا ایک دوست عجیب انسان ہے۔
کئی کئی وقت کھانا نہیں کھاتا۔
کہتا ہے کہ بھوک نہیں ہے۔
جب بھوک لگتی ہے تو دس آدمیوں جتنا کھانا کھا جاتا ہے۔
میرے ایک انکل وزیر ہیں۔
کئی کئی دن تک ایک لفظ نہیں بولتے۔
منہ میں گھنگھنیاں ڈال کے بیٹھے رہتے ہیں۔
کسی دن چپ کا روزہ توڑتے ہیں۔
پھر پریس کانفرنس کرتے ہیں تو کئی کئی گھنٹے بولتے رہتے ہیں۔