ایک لکھاری کا قلم – حنا تحسین طالب

ایک لکھاری کا قلم، قرطاس پر اس کے ذہنی رجحان، قلبی کیفیت اور اس کی شخصیت کے رنگ بکھیرتا ہے..
اگر لکھاری کا دل زخمی ہو تو قلم خون تھوکتا ہے،.. سیاہ ہو تو قرطاس پر سیاہی بکھیر کر دلوں کو سیاہ کرتا ہے..
اور دل نورانی ہو تو حرف حرف جگنو بن کر روشنی پھیلانے کو بے چین ہوجاتا ہے.
دل حساس ہو تو قلم دلوں کے تار چھیڑ دیتا ہے.
.
قلم کو اگر کسی شخصیت یا گروہ کے لیے مخصوص کر دیا جائے تو وہ ایسا کندھا بن کر رہ جاتا ہے جس پر ایک گروہ اپنی بندوق رکھ کر صرف اپنے مخالف کو شکار کر سکتا ہے..
قلم کو اگر مصلحتوں، تعصبات اور نفرت کے محدود پنجرے میں قید کردیا جائے تو وہ کچھ بھی ہو سکتا ہے مگر وہ قلم نہیں ہو سکتا جس کا ذکر اس وسعتوں والی لا محدود ہستی ”الواسع“ نے اپنی آخری الہامی کتاب میں کیا. قابل غور ہے کہ جس کا تعلق لامحدود ہستی سے ہو، اس کی نظر و فکر اتنی محدود کیسے ہو سکتی ہے؟ جو صرف دنیا سے متعلقہ مسائل اور حل کے لیے مختص ہو. ایسا نہیں ہے کہ یہ مسائل اہم نہیں، مگر دوسری زندگی، جو اصل زندگی ہے، کبھی نہ ختم ہونے والی، اس کے لیے اتنا گہرا سکوت، موت کا سناٹا.. جیسے وہ کوئی قابل ذکر و فکر مسئلہ ہی نہ ہو!

پھر دنیا میں بھی محض چند امور پر بحث.. کیا واقعی دنیا کا سب سے بڑا مسئلہ صرف سیاست ہے؟
قلم کو کچھ حدود و قیود کا پابند ضرور ہونا چاہیے مگر صرف اس کی پابندی، جس کی پابندی کا حق ہے..
جس نے تخلیق کیا حکم بھی اسی کا چلنا چاہیے..
اور صرف قلم ہی کیوں! فکر، نظر، جذبات اور ہر خواہش کو اللہ کی رضا کے تابع ہونا چاہیے..
جیسا کہ ایک صحیح حدیث میں عقل کے بارے میں فرمایا گیا..
رسول اللہ ص نے فرمایا:
”ہر شخص کے سر (دماغ) میں حکمت (عقل) ہوتی ہے، جس پر ایک فرشتہ مقرر ہوتا ہے، جب وہ تواضع اختیار کرتا ہے تو فرشتے سے کہا جاتا ہے کہ اس کی حکمت کو بڑھا دو اور جب وہ تکبر کرتا ہے تو فرشتے سے کہا جاتا ہے کہ اس کی حکمت و دانائی میں کمی کردو.“ (المعجم الکبیر للطبرانی رقم : 12765)
لہذا جو فکر، جذبہ، خواہش، قلم غرض ہر شے جتنا اللہ کے آگے سرنگوں ہوگی.. اتنی ہی بلند ہوگی..
اتنی ہی فائدہ مند اور اسے اتنی ہی بقا نصیب ہوگی..

Comments

FB Login Required

حنا تحسین طالب

حنا تحسین طالب کا تعلق کراچی سے ہے۔ درس و تدریس کے شعبے سے وابسته ہیں۔ بنیادی طور پر سپیکر ہیں اور اسی کو خاص صلاحیت سمجھتی ہیں۔ دلیل کی مستقل لکھاری ہیں

Protected by WP Anti Spam