میلاد نبی ﷺ منانا بدعت، بجا ارشاد، مگر - زبیر منصوری

میلاد نبی ﷺ منانا بدعت !\r\nبجا ارشاد\r\nسالگرہ غیر شرعی\r\nجو حکم، منظور\r\nیاد حسین رض میں حدود سے تجاوز پر آپ کا سخت رد عمل!\r\nمستند ہے آپ کا فرمایا ہوا\r\nکونڈے، نذر نیاز حرام!\r\nسر تسلیم خم!\r\nتوحید تو بس آپ سے شروع ہو کر آپ ہی پر ختم ہو جاتی ہے !\r\nماشاء اللہ، تبارک اللہ\r\nآپ قران و حدیث کے اول و آخر علمبردار! \r\nہمیں قبول\r\nڈاڑھی آپ کی شرعی، ٹخنے آپ کے ننگے، عمامہ آپ ہی پہ سجتا ہے۔\r\nخوب بلکہ بہت خوب!\r\nاور آپ، یہ دوسرے والے آپ کے اکابر بھی سچے، ان کے خواب تک لائق احترام اور لائق تقلید \r\nبجا!\r\nآپ کی فضائل پر تحریریں!\r\nکیا کہنے، واللہ\r\nمگر جان اور آپ کے ہاتھوں اپنے ایمان کی امان پاؤں تو کچھ عرض کروں؟\r\nیہ جو اللہ کی زمین پر، اللہ کے بندوں پر، اللہ کے دشمن کی مرضی صدیوں سے جاری ہے، اور اللہ کا دین بےچارہ زخم خوردہ اور جائے پناہ تک سے محروم ہے، اس کے بارے میں کیا فرماتے ہیں علمائے دین متین؟ کوئی فتوی؟ کوئی تقریر؟ کوئی ارشاد؟ کچھ تو ادھر بھی؟\r\nیہ جو ہر طرف فوجی اور غیر فوجی ”شرک فی الاقتدار“ جاری ہے، کھلا کھلا حرام کام ہو رہا ہے، اس کے بارے میں بھی آپ کے سلف و خلف نے کچھ ارشاد فرمایا ہے؟\r\nیا اللہ کے مقابلے میں ابوجہل کے اتحادی ہی نہیں، اس کے ہاتھوں کٹھ پتلی بنے رہنا میلاد رسول منانے سے بھی چھوٹا جرم ہے؟\r\nذرا سلف کی نشانی علامہ ساجد میر سے معلوم کر کے ہم جاہلوں کو بتائیے کہ ایک سینیٹر بن جانا، سودی نظام کے وکیل نواز شریف کو نظام سود نافذ کرنے کا لائسنس دینے سے زیادہ اہم ہے؟\r\nذرا علم و تعزیہ کو بجا طور پر شرک قرار دینے والے دوست مولانا فضل الرحمن سے یہ پوچھ کر بتائیں گے کہ آصف زرداری، بےنظیر بھٹو، پرویز مشرف اور نواز شریف، یہ ہر حکومت کیا کسی شرک ورک کی مرتکب نہیں رہی؟ یہ سارے پاک پوتر لوگ ہیں جن کو مولانا کندھا دیے رہے۔\r\nافسوس کہ اقتدار کی غلام گردشوں میں چین کی بانسری بجا کر ضمیر کو لوریاں دینے، اور وقت کے ابوجہل صفت حکمرانوں کو مفت کے سپاہی فراہم کر نے والے یہ ”دیندار“ جب میلاد رسول کو جرم قرار دیتے ہیں، تو مجھے یہ میلاد مناتے معصوم لوگ پیارے لگنے لگتے ہیں، جو ”شرک فی الاقتدار“ کے بڑے جرم سے بچے ہوئے ہیں، بس اپنے نبی سے محبت کے اظہار کا طریقہ غلط اختیار کیے ہوئے ہیں ۔\r\nاور یہ دوسرے والے بھائی محمد رسول اللہ کے مقابل سودی نظام والوں کے اتحادی بن کر بھی تقی اللہ متقی اور شریف الدین شریف بنے بیٹھے ہیں۔\r\nجو چاہے آپ کا حسن کرشمہ ساز کرے۔۔

Comments

زبیر منصوری

زبیر منصوری

زبیر منصوری نے جامعہ منصورہ سندھ سے علم دین اور جامعہ کراچی سے جرنلزم، اور پبلک ایڈمنسٹریشن کی تعلیم حاصل کی، دو دہائیاں پہلے "قلم قبیلہ" کے ساتھ وابستہ ہوئے۔ ٹرینر اور استاد بھی ہیں. امید محبت بانٹنا، خواب بننا اوربیچنا ان کا مشغلہ ہے۔ اب تک ڈیڑھ لاکھ نوجوانوں کو ورکشاپس کروا چکے ہیں۔

تبصرہ کرنے کے لیے کلک کریں