شاخِ نازک پہ آشیاں – رضوان اسد خان

اسلام آباد، جہاں غالباً سوائے اسلام کے سب کچھ آباد ہے، کے لبرل والدین کو اپنی بچیوں کی چائے والے کے ساتھ سیلفیاں دیکھنے، سراہنے اور ان پر اترانے سے فرصت ملے تو کچھ اپنی اولاد کے سکولوں، کالجوں کی بھی خبر لیں جہاں سے انہیں بدکاری کا ایندھن مہیا کیا جا رہا ہے.\n\nجی ہاں، ہمارے ہاں “جہاز” اب صرف چائنہ کے تعاون سے فیکٹریوں میں ہی نہیں بلکہ بھارتی را اور امریکی بلیک واٹر کے تعاون سے دارالحکومت کے تعلیمی اداروں میں بھی تیار کئیے جا رہے ہیں. \nنہیں سمجھے؟ \nجناب، جن سکولوں میں آپ مولویوں کو گالیاں دینے کی تربیت دیکر، مذہب کو افیون بتلاتے تھے، ذرا قدرت کی ستم ظریفی ملاحظہ فرمائیں کہ انہی سکولوں کے 53 فیصد بچے خود افیمچی بن گئے ہیں.\n\nکیا فرمایا؟ ایسا کچھ نہیں کہا جاتا وہاں؟ ابھی چند ماہ قبل ہی تو اسی اسلام آباد کے سکول کے ایک استاد کا کلپ وائرل ہوا ہے جس میں وہ جنت، خدا اور مولوی کا مذاق اڑاتا نظر آ رہا ہے.\n\n”جہالت“ کی نرسریاں مدرسے نہیں محترم، بلکہ “جاہلیت” کی نرسریاں یہ سیکولر سکولز ہیں جہاں:\n میوزک کلاسز نصاب کا لازمی جزو ہیں،\nمغربی گویوں، بھانڈ میراثیوں کو بطور ہیرو پیش کیا جاتا ہے(آنکھوں دیکھا حال)،\n پاڑٹیز میں شرفاء کی بیٹیاں مجرے کرتی ہیں،\nبچے باپ کے پستول سے دوسرے بچوں کا قتل کرتے ہیں،\nاستادوں، ساتھیوں اور حتی کہ کینٹین تک سے منشیات لیکر سوٹے لگاتے ہیں،\nگروپ سیکس سے کم پر بات نہیں ہوتی،\nہم جنس پرستی کو ”نارمل بی ہیوئیر“ سمجھا جاتا ہے،\nاور پھر مغربی فلسفے اور تہذیب سے متاثر آخر میں پوری ایک کھیپ ”ابو جہلوں“ کی معاشرے میں برامد کر دی جاتی ہے.\n\nاور اب یہ جاہلیت کے سرخیل، \nپارلیمنٹ، عدالتوں، بیوروکریسی، میڈیا، صحافت، شعبہ تدریس وغیرہ میں اعلی عہدوں پر پہنچ کر مغربی آقاؤں سے وفاداری کا عہد نبھاتے ہیں،\nعوام کی قسمت کے فیصلے دشمن کی پالیسیز، آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کے مطابق کرتے ہیں، \nاپنی نجی محفلوں میں شراب و کباب، حسن و جمال اور رقص و سرود کا بندوبست کرنا فخر سمجھتے ہیں،\nبیگمات کو بطور رشوت پیش کرنے کو عار اور بے غیرتی نہیں، ”ٹیکٹ“ سمجھتے ہیں،\nسود کے حق میں غامدیت کے فتوے جمع کرتے ہیں،\nشراب پر پابندی کی راہ میں روڑے اٹکاتے ہیں،\nبچوں کی شادیوں کو بزنس اور زنا کو قابلیت سمجھتے ہیں\nاور پھر کہتے ہیں یہ لبرل، سیکولر معاشرے کا حسن ہے کہ انسان Pursuit of Happiness میں آزاد ہو….!!!

Comments

FB Login Required

رضوان اسد خان

ڈاکٹر رضوان اسد خان پیشے کے لحاظ سے چائلڈ سپیشلسٹ ہیں لیکن مذہب، سیاست، معیشت، معاشرت، سائنس و ٹیکنالوجی، ادب، مزاح میں دلچسپی رکھتے ہیں، اور ان موضوعات کے حوالے سے سوالات اٹھاتے رہتے ہیں

Protected by WP Anti Spam